Wednesday , September 27 2017
Home / Top Stories / شہر چینائی معمولاتِ زندگی کی بحالی کی سمت گامزن

شہر چینائی معمولاتِ زندگی کی بحالی کی سمت گامزن

ٹرین سرویس کی جزوی شروعات ، اشیائے ضروریہ کی قلت، عوام کی اکثریت پانی و برقی سے محروم
چینائی 5 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) سیلاب کے پانی میں محصور چینائی شہر ہنوز معمولاتِ زندگی کی بحالی جدوجہد کررہا ہے جبکہ مواصلات اور ٹرین خدمات جزوی طور پر شروع کردی گئی ہیں۔ تاہم شہر کے بیشتر علاقے زیرآب ہیں اور سڑکوں پر پانی جمع ہوجانے سے ٹریفک میں رکاوٹ برقرار ہے۔ سرکاری اطلاعات کے بموجب یکم اکٹوبر سے شروع ہوئی موسلا دھار بارش میں جملہ 245 افراد ہلاک ہوگئے ہیں لیکن منگل کو پورا شہر سیلاب میں ڈوب جانے سے صورتحال سنگین ہوگئی تھی۔ جس میں اہم سڑکیں اور ریل رابطہ کو زبردست نقصان ہوا، طیرانگاہ کو بند کرنا پڑا، برقی اور ٹیلی مواصلات کی لائنس منقطع ہوگئیں اور لاکھوں افراد پانی میں محصور ہوگئے تھے۔ اگرچیکہ شہر کے بعض علاقوں کتور پورم، سب اربن مودی چور اور پلائی کلکرنی میں سیلاب کا پانی دھیرے دھیرے اُتر رہا ہے لیکن بے یار و مددگار عوام جوکہ بلند عمارتوں میں پناہ لئے ہوئے ہیں پانی اور دودھ جیسی اشیائے ضروریہ کی فراہمی کے انتظار میں ہیں، جن کی شدید قلت پائی جاتی ہے۔ دریں اثناء بینکوں کے اے ٹی ایم اور پٹرول پمپس پر طویل قطاریں دیکھی گئیں۔ ٹاملناڈو حکومت نے بتایا کہ آئندہ دو تین یوم میں ایندھن کی قلت دور ہوجائے گی اور اتوار کو تعطیل کے باوجود تمام بینک کام کریں گے جبکہ چینائی کے جنوبی علاقوں کو قلب شہر سے جوڑنے والی ٹرین سرویس بحال کردی گئی ہے جہاں پر اشیائے ضروریہ کی سربراہی کی اشد ضرورت ہے۔ شہر چینائی اور مضافاتی علاقوں کے عوام ہنوز برقی سے محروم ہیں اور ساری رات ڈر و خوف میں جاگتے ہوئے گزاری کیوں کہ یہ افواہ پھیل گئی تھی کہ چیمبار اپکم تالاب میں شگاف پڑ گیا ہے اور اس کا باندھ کسی بھی وقت ٹوٹ سکتا ہے۔ بعدازاں پولیس نے تالاب کا معائنہ کرنے کے بعد اس افواہ کو جھوٹی قرار دیا اور کہاکہ عوام کو خوفزدہ ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔

TOPPOPULARRECENT