Saturday , October 21 2017
Home / شہر کی خبریں / شہر کی تہذیب و تمدن ، فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو مستحکم بنانے آصف جاہ سادس کا اہم کردار

شہر کی تہذیب و تمدن ، فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو مستحکم بنانے آصف جاہ سادس کا اہم کردار

نواب میر برکت علی خاں بہادر کی کل سالگرہ منانے محترمہ رانی اندرا دھنراج گیرجی کی اپیل
حیدرآباد۔4اکٹوبر(سیاست نیوز) آصف جاہ سادس نواب میر برکت علی خان مکرم جاہ بہادرکی 6اکٹوبر کو سالگرہ ہے اور آصف جاہی خاندان نے شہر حیدرآباد کی عظمت میں اضافہ کے علاوہ شہر کی تہذیب و تمدن اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو مستحکم بنانے میں کلیدی کردار ادا کیا ہے۔ محترمہ رانی اندرا دھنراج گیر جی نے 6اکٹوبر کو شہر میں نواب میر برکت علی خان کی سالگرہ منانے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ حیدرآباد و سابق ریاست دکن کے تمام ہندو۔مسلم عوام کو چاہئے کہ وہ سلطنت آصفیہ کے چشم و چراغ مکرم جاہ بہادر کی صحت و درازی عمر کے لئے دعائیہ اجتماعات منعقد کریں ۔ محترمہ رانی اندرا دھنراج گیر جی نے کہا کہ ملک میں ریاست دکن حیدرآباد ایک ایسی ریاست تھی جہاں رعایا پروراور سیکولر بادشاہت ہوا کرتی تھی۔ انہوں نے اپنے بیان میں آصف جاہ ششم نواب میر محبوب علی خان (محبوب علی پاشاہ) کی خدمات اور ان کی رعایا پروری کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ حیدرآباد میں طغیانی کی تباہی کے بعد نواب میر محبوب علی خان نے نذر و نیاز کے ذریعہ لاکھوں کے زیورات ندی کے حوالہ کئے اور اسی طرح کئی منادر و مساجد کی تعمیر میں بھی حکومت کا کلیدی کردار رہا۔ انہوں نے شہریان حیدرآباد سے خواہش کی کہ وہ نواب میر برکت علی خان مکرم جاہ بہادر کی سالگرہ منائیں اور ان کے حق میں دعا ء کریں۔ محترمہ اندرا دھنراج گیر نے کہا کہ آصف جاہی دور حکومت میں ریاست میں نہ صرف تعلیمی نظام فروغ ہوا بلکہ ریاست کے مختلف شعبوں میں ترقی کو دوراندیش حکمرانوں نے یقینی بناتے ہوئے حیدرآباد کو عالمی شہرت یافتہ ریاست بنا دیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT