Thursday , October 19 2017
Home / شہر کی خبریں / شہر کی سڑکوں کی تعمیر کا گھٹیا معیار

شہر کی سڑکوں کی تعمیر کا گھٹیا معیار

بارش کا پانی جمع رہنے سے سڑکوں کو نقصان
حیدرآباد 24 جولائی (سیاست نیوز) شہر میں سڑکوں کی تعمیر کے گھٹیا معیار اور بارش کے پانی کے بہاؤ کے کوئی راستے نہ ہونے کی وجہ سے بارش ہوتے ہی سڑکیں خستہ حال ہوجاتی ہیں۔ روڈ کنسٹرکشن کے ماہرین نے یہ نشاندہی کرتے ہوئے کہاکہ گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن حدود میں 6 ہزار چار سو کیلو میٹرس سڑکوں کے بعض حصے حالیہ بارش سے بری طرح متاثر ہوئے ہیں اور جس قدر جلد ممکن ہو بارش کے پانی کے بہاؤ کو یقینی بنانے کے لئے اقدامات کئے جائیں۔ بارش کا پانی ہو یا ڈرینج کی گندگی دو یا تین منٹ سے زیادہ سڑکوں پر نہیں رہنا چاہئے۔ کیوں کہ ایسی صورت میں سڑکوں کو نقصان ہوتا ہے۔ روڈ کنسٹرکشن کے ماہر ڈاکٹر جی این ملکارجن راؤ منیجنگ ڈائرکٹر پرومارگ نے یہ تاثر ظاہر کیا۔ ڈاکٹر راؤ نے جو ہائی وے روڈ کنسٹرکشن پراجکٹس کے کنسلٹنٹ ہیں کہاکہ شہر کی سڑکوں کے آس پاس کھلے اور زیر زمین ڈرینج کی کمی ہے۔ بارش کا پانی سڑکوں پر خشک نہ ہو ایسا ہونے سے سڑکیں خراب ہوجاتی ہیں۔ انھوں نے کہاکہ ناقص اور غیر معیاری تعمیر بھی سڑکوں کی خستہ حالی کی ایک وجہ ہے۔ انھوں نے کہاکہ پانچ سال میں ایک مرتبہ سڑکوں کی تعمیر نو اور نئی صورت گری ضروری ہے۔ سڑکوں کی تعمیر کے عالمی معیارات کی پابندی نہ کرنے سے سڑکیں تباہ ہورہی ہیں۔ سڑکوں کی تعمیر کرتے ہوئے اس کے استعمال کی نوعیت پیش نظر رکھنا چاہئے۔ گاڑیوں کی نوعیت گاڑیوں کی تعداد جیسے اُمور سڑکوں کی تعمیر کے وقت پیش نظر رکھنا چاہئے۔ بھاری سامان سے لدے ٹرکس کے بار بار سڑکوں سے گزارنے کی وجہ سے بھی سڑکوں پر گڑھے پڑرہے ہیں۔ ناقص تعمیر شدہ سڑکیں ٹرکس گزرنے سے بار بار خراب ہوتی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT