Thursday , October 19 2017
Home / شہر کی خبریں / شی ٹیم کے بعد خواتین کی مدد کیلئے عورتوں کی ٹیم

شی ٹیم کے بعد خواتین کی مدد کیلئے عورتوں کی ٹیم

ناچارم میں آغاز ، سائیبرآباد پولیس کا اقدام ، مہیش مرلی بھگوت کا خطاب
حیدرآباد /6 جولائی ( سیاست نیوز ) خواتین کے تحفظ کیلئے مثالی اقدامات کرنے والی رچہ کنڈہ پولیس نے مزید آگے بڑھتے ہوئے منفرد اقدام کا آغاز کیا ہے ۔ عورتوں کی مدد کیلئے عورتوں کی ٹیم کو تیار کیا ہے ۔ شی ٹیم کی کارکردگی سے مطمین پولیس نے اب عورتوں کی مدد کیلئے عورتوں کے ذریعہ خدمات حاصل کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ اس باوقار پروگرام کا آج ناچارم میں آغاز عمل میں لایا گیا ۔ اس موقع پر کمشنر رچہ کنڈہ پولیس مسٹر مہیش مرلی دھر بھگوت کے علاوہ ریاست تلنگانہ کے ویمن کینن چیرپرسن محترمہ ٹی وینکٹا رتنم بھی موجود تھیں ۔ کمشنر پولیس نے اس پروگرام کو اہمیت اور کارکردگی کے طریقہ کار کو بتاتے ہوئے کہاکہ شی ٹیم کی بہترین کارکردگی کے بعد پولیس نے اس بات کو محسوس کیا کہ آیا کالج کے باہر بازاروں ، بس اسٹاپس ، سیر و تفریح کے مقامات پر تو شی ٹیم موجود رہتی ہیں اور اپنی نظریں جمائے رہتی ہیں ۔ لیکن کالج کے اندرون احاطہ ایسی لڑکیوں کی اکثریت پائی جاتی ہیں ۔ جو ہراسانی ، چھیڑ چھاڑ کے باوجود بھی مسئلہ کو پولیس سے رجوع نہیں کرتیں بلکہ پولیس تک پہونچنے کیلئے وہ ہچکچاہٹ کا شکار ہیں ۔ ایسے حالات کو دیکھتے ہوئے رچہ کنڈہ پولیس نے ایک نئے اور منفرد پروگرام شی فار ہر She for Her کا آغاز کیا ہے ۔ اس پروگرام کے تحت ہر کالج سے دو سینئیر طالبات ( لڑکیوں ) کو منتخب کیا جائے گا اور انہیں خصوصی تربیت دی جائے گی ۔ خواتین پر مظالم کے متعلق خواتین اور مظالم و ہراسانیوں کے خلاف اقدامات کئے جانے والے اقدامات کو بتایا جائے گا اور یہ دو لڑکیاں کالج کی شی فار ہر ہوں گی ۔ متاثرہ لڑکیاں جو پولیس اسٹیشن سے رجوع ہونے میں پس و پیش کا شکار ہیں ۔ ایسی لڑکیاں اپنے کالج کی شی فار ہر کو شکایت کرسکتی ہیں اور یہ ٹیم پولیس سے رجوع ہونے میں مدد و رہنمائی کے علاوہ موثر کارروائی کیلئے بھی نمائندگی کریں گی ۔ اس موقع پر مختلف خواتین تنظیموں کے ذمہ داران بھی موجود تھیں ۔

 

TOPPOPULARRECENT