Tuesday , October 17 2017
Home / Top Stories / صادق خان لندن کے پہلے مسلم میئر منتخب

صادق خان لندن کے پہلے مسلم میئر منتخب

لندن ، 6 مئی (سیاست ڈاٹ کام) صادق خان کو آج رات لندن کا اولین مسلم میئر قرار دے دیا گیا جبکہ انھوں نے ٹوری حریف زاک گولڈسمتھ کو بہ آسانی شکست دی۔ انتخابی نتائج میں جرمی کوربن کیلئے امید کی کرن نظر آئی، لیکن سٹی ہال میں جیسے جیسے نتائج ابھرنے لگے ، واضح ہوگیا کہ گولڈسمتھ کی کامیابی کا کوئی امکان نہیں۔ صادق خان کے انتخاب کا سرکاری اعلان عنقریب کیا جائے گامگر انتخابات کے ماہر مائیکل تھراشر نے آج رات اعلان کردیا کہ یہ انتخابی مقابلہ اب تک جاری کردہ اعداد و شمار کی اساس پر ختم ہوچکا ہے۔ قطعی نتائج کا اعلان تمام پہلے اور دوسرے ترجیحی ووٹوں کی گنتی کے بعد کیا جائے گا۔ تلخی بھرے انتخابی مقابلے میں گولڈسمتھ اور ڈیوڈ کیمرون نے بار بار صادق خان کے انتہاپسندوں کے ساتھ روابط کا مسئلہ اٹھایا تھا۔ لیکن ایسی باتوں نے دارالحکومت میں ووٹروں کو متنفر نہیں کیا اور وزیراعظم کو اب اپنی حکمت عملی پر کنزرویٹیو پارٹی کی طرف سے زبردست جوابی وار کا سامنا ہے۔ کوربن نے صادق خان کی فتح کا خیرمقدم کرتے ہوئے ٹویٹ کیا، ’’آپ کے ساتھ کام کرنے کا بے چینی سے منتظر ہوں کہ لندن کو سب کیلئے منصفانہ مقام بناسکیں‘‘۔ لیبر پارٹی سے وابستہ 45 سالہ صادق خان جو ایک پاکستانی بس ڈرائیور کے سپوت ہیں، نئے میئر کی حیثیت سے بورس جانسن کے جانشین بنیں گے۔ انھیں لندن کے چار بڑے پالیسی شعبوں ٹرانسپورٹ، پولیسنگ، ماحولیات اور امکنہ و منصوبہ بندی پر کنٹرول حاصل ہے۔ اور ان تمام پر لندن اسمبلی کی گہری نظر ہے۔ اس اسمبلی سے گریٹر لندن اتھارٹی بجٹ پر مشاورت لازمی ہوتی ہے۔ اگر دو تہائی ارکان اسمبلی متفق رہیں تو یہ ایوان میئر کی پالیسیوں کو مسترد یا مسودہ بجٹ میں ترمیم بھی کرسکتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT