Friday , August 18 2017
Home / Top Stories / صرف منصف ہی نہ رہیںبلکہ نظر بھی آئیں : صدرجمہوریہ

صرف منصف ہی نہ رہیںبلکہ نظر بھی آئیں : صدرجمہوریہ

گورنروں کو ریاستی کارروائیاں تیز رفتار بنانے کا کام کرنا چاہئے :وزیراعظم
نئی دہلی ۔ 10 فبروری(سیاست ڈاٹ کام) صدرجمہوریہ پرنب مکرجی نے آج گورنروں کی دو روزہ کانفرنس کی اختتامی خطبہ دیتے ہوئے کہا کہ گورنروں کو دستور کے چوکھٹے کے اندر رہ کر کام کرنا چاہئے۔ انہیں صرف منصف ہی نہیں ہونا بلکہ نظر بھی آنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ گورنروں پر ذمہ داری ہیکہ دستور کا تحفظ اور اس کا دفاع کریں۔ کل انہوں نے اپنے افتتاحی خطبہ میں کہا تھا کہ دستوری عہدوں پر فائز افراد کو دستور کی تخفیف برقرار رکھنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ سخت نگرانی، سختی سے عمل آوری اور ترقی کا کارآمد ہونا سوچھ بھارت مہم کی کامیابی کیلئے ضروری ہے۔ مشرقی ہند کی ریاستوں کے گورنروں کو خاص طور پر شمال مشرقی ریاستوں کے گورنروں کو حکومت کی مشرق کی طرف دیکھو پالیسی میں سرگرمی سے شرکت کرنا چاہئے۔

صدرجمہوریہ نے کہا کہ بعض گورنرس قابل ستائش کام کررہے ہیں۔ دوسری ریاستوں کے گورنروں کو ان کی تقلید کرنا چاہئے۔ نائب صدرجمہوریہ حامد انصاری، مرکزی وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ، وزیرخارجہ سشماسوراج، وزیرفینانس ارون جیٹلی، وزیردفاع منوہر پاریکر اور مشیر قومی سلامتی اجیت دوول دیگر مقررین میں شامل تھے۔ وزیراعظم نریندر مودی نے اروناچل پردیش کے گورنر کی کارروائیوں کے بارے میں تنازعہ کے پس منظر میں کہا کہ گورنروں کو صرف ریاستی حکومت کی کارروائیوں میں تیز رفتار پیدا کرنے والے کا کردار ادا کرنا چاہئے۔ خود کارروائیوں کا حصہ بنے بغیر انہیں بہتر بنانا چاہئے۔ وہ گورنروں کی 47 ویں کانفرنس سے راشٹرپتی بھون میں خطاب کررہے تھے۔ وزیراعظم نے کہا کہ گورنر ایک منفرد اعلیٰ عہدہ پر ہوتے ہیں جس کی وجہ ان کے سابقہ تجربہ اور اس عہدہ کے وقار کی بناء پر انہیں اس فائز کیا جاتا ہے۔ وزیراعظم نے کہا کہ گورنروں کو یہ ذہن نشین رکھنا چاہئے کہ ان کے پیشرو کس طرح اس عہدہ پر کام کرچکے ہیں اور انہیں ان کی تقلید کرنا چاہئے۔

TOPPOPULARRECENT