Thursday , August 17 2017
Home / عرب دنیا / ضبط شدہ ایرانی دھماکو مادہ مناما کی تباہی کیلئے کافی تھا

ضبط شدہ ایرانی دھماکو مادہ مناما کی تباہی کیلئے کافی تھا

ایران، بحرین اور علاقہ میں دہشت گردی کو فروغ دے رہا ہے: وزیرخارجہ
مناما ۔13ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) عرب ممالک خاص کر مملکت بحرین کا الزام ہے کہ ایران اپنے دہشت گردانہ عزائم اور حرکات کے ذریعہ علاقہ میں سلامتی اور استحکام کو نقصان پہنچانے کی جان توڑ کوششیں کررہا ہے، لیکن اس کے ناپاک عزائم و ارادے مسلسل ناکامی سے دوچار ہیں۔ کچھ برسوں سے ایران کے بارے میں کہا جارہا ہے کہ وہ مختلف عرب ممالک میں دہشت گردی کو ہوا دے کر وہاں بے چینی پیدا کررہا ہے۔ اس معاملہ میں بحرین اور یمن تازہ مثالیں ہیں۔ بحرینی حکام کے مطابق کئی مرتبہ ایران سے بھیجے گئے دھماکو مادوں، اسلحہ و گولہ بارود کی کثیر مقدار ضبط کی گئی لیکن جاریہ سال جولائی میں بحرینی حکام نے آبی راستے سے بحرین روانہ کردہ ایک ایسی کشتی کو ضبط کرلیا جس میں دھماکو مادے اسمگل کئے گئے تھے، بحرینی وزیر خارجہ شیخ خالد بن احمد الخلیفہ کا کہنا ہے کہ وہ دھماکو مادے بحرینی دارالحکومت منامہ کو مکمل طور پر تباہ کرنے کے لئے کافی تھے۔ بحرین نیوز ایجنسی کی ایک رپورٹ میں بتایاگیا کہ شیخ خالد بن احمد الخلیفہ نے پڑوسی ملک ایران پر جو مملکت میں مسلسل بے چینی پیدا کرنے کی کوشش کررہا ہے۔ زور دیا کہ وہ دیگر ملکوں کے داخلی معاملت میں مداخلت سے گریز کرے۔ ان کے خیال میں تہران دوغلے پن کی پالیسی پر عمل پیرا ہے۔ اس کے قول و فعل میں تضاد پایا جاتا ہے۔ انہوں نے تہران کو اپنی خارجہ پالیسی پر قربانی کا مشورہ بھی دے ڈالا۔ فرانسیسی اخبار لی فیگارو کو دیئے گئے ایک علیحدہ انٹرویو میں قطری وزیر خارجہ یمن میں ایرانی اثر و رسوخ اور مداخلت کے خاتمہ کے لئے زمینی حملہ کی ضرورت ظاہر کی۔ بحرینی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ یمن میں اقوام متحدہ کی قرارداد 2216 کے اطلاق اور اقتدار پر فائز  حکومت کی بحالی کے لئے ہمیں زمینی کارروائی کرنی چاہئے۔ ہمیں اس بات کو یقینی بنانا ہوگا کہ یمن میں ایرانی اور اس کے حلیف حوثیوں کے بے اثر ہو جائیں۔
واضح رہے کہ بحرینی شیعہ حوثی باغیوں پر سعودی عرب کی زیر قیادت مارچ سے جاری حملوں میں بحرین بھی شامل ہے۔ وہ حوثی باغیوں کے خلاف عرب اتحاد کا ایک حصہ ہے۔ یہ اتحاد یمن کا مکمل کنٹرول حاصل کرنے حوثیوں کی کوشش روکنے میں مصروف ہے تاکہ یمن پر اس کے جائز صدر عبدابو منصور ہادی کی حکومت بحال ہو۔ قطری وزیر خارجہ کے مطابق اب زمینی فوج بھیجنے کا وقت آگیا ہے کیونکہ ہم مسلسل مزائلوں کی زد میں نہیں آسکتے۔ انہوں نے حوثیوں کے خلاف ایک نیا طریقہ و حربہ استعمال کرنے کی وکالت کی۔

TOPPOPULARRECENT