Thursday , August 17 2017
Home / پاکستان / ضرب عضب کے دو سال مکمل ، 500 پاکستانی سپاہی ہلاک

ضرب عضب کے دو سال مکمل ، 500 پاکستانی سپاہی ہلاک

3,500 عسکریت پسندوں کی ہلاکتوں کے بعد شورش زدہ وزیرستان دہشت گردی سے پاک: پاکستانی فوج
اسلام آباد۔15 جون (سیاست ڈاٹ کام) پاکستانی فوج نے آج کہا کہ شورش زدہ قبائیلی علاقہ سے دہشت گردوں کے صفائے کیلئے شروع کردہ دو سال طویل فوجی مہم ’ضرب عضب‘ کے دوران تاحال 500 پاکستانی سپاہی اور 3,500 عسکریت پسند ہلاک ہوئے ہیں۔ ’ضرب عضب‘ کی دوسری سالگرہ کے موقع پر فوجی ترجمان لیفٹننٹ جنرل عاصم باجوا نے کہا کہ ’وفاقی زیرانتظام قبائیلی علاقہ (فاٹا) اب تمام عسکریت پسندوں سے پاک صاف ہوچکا ہے اور سپاہی (افغانستان سے متصلہ) سرحدوں تک پہنچ چکے ہیں‘۔ ضرب عضب مہم 15 جون 2014ء کو شروع کی گئی تھی جس کا مقصد شمالی وزیرستان سے القاعدہ سے مربوط عسکریت پسندوں کا صفایا کرنا تھا۔ انہوں نے کہا کہ مہم کے دوران عسکریت پسندوں کے 992 محفوظ ٹھکانوں کو تباہ کردیا گیا۔ 253 ٹن دھماکو مواد ضبط کیا گیا۔ 7,500 بموں کی فیکٹریاں تہس تہس کردی گئیں، 2,800 زمینی سرنگوں کو ہٹایا گیا اور 3,500 راکٹس اور مورٹار برآمد کئے گئے۔ انہوں نے کہا کہ ’عسکریت پسندوں کے پاس دھماکو اشیاء کا خاطر خواہ ذخیرہ تھا جس کے ذریعہ وہ یومیہ 7 بم حملوں کے حساب سے 15 سال تک لگاتار بم حملوں کا سلسلہ جاری رکھ سکتے تھے۔

TOPPOPULARRECENT