Saturday , October 21 2017
Home / شہر کی خبریں / ضرورت پڑنے پر سرگرم سیاست کا حصہ بننے کا اعلان

ضرورت پڑنے پر سرگرم سیاست کا حصہ بننے کا اعلان

تلنگانہ پولٹیکل جے اے سی کی ملازمتوں کے لیے تحریک ، پروفیسر کودنڈا رام
حیدرآباد۔17فبروری(سیاست نیوز) چیرمن تلنگانہ جوائنٹ ایکشن کمیٹی پروفیسر کودنڈارام نے کہاکہ جب تک حکومت تلنگانہ ریاستی سطح پر درکار ملازمتوں میںتقررات کو عملی جامہ نہیںپہناتی تب تک تلنگانہ جوائنٹ ایکشن کمیٹی حسب ضرورت اس کے خلاف تحریک چلائی گئی، اس ضمن میں 22فبروری کو باغ لنگم پلی تک اندرا پارک ایک بڑی ریالی نکالی جارہی ہے جس میںریاست بھر سے بے روزگار نوجوانوں کی شرکت متوقع ہے اور اس ریالی کا مقصد ریاست تلنگانہ میںبے روزگار نوجوانوں کی زبوں حالی کا حکومت تلنگانہ کو احساس دلانا ہے۔آج یہاں نیو پریس کلب سوماجی گوڑہ میں تلنگانہ جرنلسٹ یونین کے زیراہتمام منعقدہ ’ صحافت ‘ سے ملاقات پروگرام سے وہ خطاب کررہے تھے۔انہو ںنے کہاکہ چیف منسٹر کے چندرشیکھر رائو نے حکومت کے پہلے سال میں ایک لاکھ سات ہزار مخلوعہ جائیدادوں پر تقررات کو یقینی بنانے کا وعدہ کیاتھا جبکہ اسی سال تیس ہزار کے قریب ملازمین ریٹائرڈہوگئے لہذا ایک لاکھ37ہزار جائیدادیں تلنگانہ کے مختلف محکمہ جات میںمخلوعہ ہیں جن پر تقررات کے ذریعہ تلنگانہ سے بے روزگاری کا خاتمہ کیاجاسکتا ہے مگر حکومت تلنگانہ اس سلسلے میںسنجیدگی کا اظہار نہیں کررہی ہے ۔کودنڈارام نے کہاکہ حکومت کو چاہئے کہ وہ اپنے وعدے کی تکمیل کرتے ہوئے مخلوعہ جائیدادوں پرتقررات کو یقینی بنانے کاکام کرے۔ ساتھ ہی حکومت تلنگانہ علاقائی بنیادوں پر تقررات کے عمل کو بھی لاگوکرے جس کے لئے پوری تلنگانہ تحریک کے دوران بحث وتکرار کی جاتی رہی ہے ۔ انہوں نے مزیدکہاکہ خانگی کمپنیوںمیں بھی علاقائی سطح پر پچاس فیصد تحفظات کا نفاذ ضروری ہے ۔ کودنڈارام نے کہاکہ مخلوعہ جائیدادوں پر تقررات میںتاخیرکی وجہہ سے ریاست تلنگانہ کے نوجوان طبقے میںبڑے پیمانے پر مایوسی پیدا ہورہی ہے جو تشویش ناک بات ہے ۔انہوں نے کہاکہ تلنگانہ جوائنٹ ایکشن کمیٹی کا مقصد نوجوانوں میںپیدا ہونے والی مایوسی دورکرتے ہوئے انہیں توقعات کے مطابق ملازمتوں کے مواقع فراہم کرنے کے حالات بنانا ہے۔انہوں نے کہاکہ جب کبھی جے اے سی ریاست تلنگانہ کے عوام ‘ بالخصوص بے روزگاری ‘ تعلیم اور معاشی مسائل پر حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتی ہے تو فوری طور پراس کے ردعمل میںہم پر بے بنیاد الزامات عائد کئے جاتے ہیں ۔یہ جمہوریت کے عین خلاف ہے ۔انہوں نے کہاکہ تمام شعبہ حیات میںمسلم تحفظات کے لئے بھی ہماری جدوجہد جاری ہے ‘ ہم سدھیر کمیشن کے چند ایک سفارشات جس میںراست تلنگانہ کے مسلمانوں کوفائدہ پہنچانے کی بات کہی گئی اس کے متعلق عوام میں شعور بیداری مہم چلارہے ہیں۔انہوں نے کہاتلنگانہ کے اضلاعوں میں بھی ٹی جے اسی اس پر کام کررہی ہے ۔سیاسی پارٹی کے متعلق پوچھے گئے سوال کا جواب دیتے ہوئے کودانڈرام نے اشاروں میںبتایاکہ اگر ضرورت پڑنے وہ بذات خود سرگرم سیاست کاحصہ بن سکتے ہیں۔مگر کودانڈرام نے کہاکہ تلنگانہ جوائنٹ ایکشن کمیٹی ایک غیر سیاسی پلیٹ فارم ہے جس کے قیام کا مقصد تلنگانہ کی عوام کے ساتھ انصاف کو یقینی بنانے ہے اور مستقبل میںبھی جے اے سی ایک غیرسیاسی پلیٹ فارم کے طور پر کام کرتے ہوئے تلنگانہ کی عوام کے ساتھ ہونے والی ناانصافیوںپر صدائے احتجاج بلند کرتا رہے گا۔کودانڈرام نے کہاکہ تلنگانہ جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے زیراہتمام منعقد ہونے والی22فبروری کی ریالی برائے روزگار کی فراہمی کو کامیاب بنانے اور زیادہ سے زیادہ لوگ سے اس میںشریک ہونے اپیل بھی کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT