Wednesday , October 18 2017
Home / دنیا / ضعیف اور معذور ماں کی خدمت کرنے والا معذور بیٹا

ضعیف اور معذور ماں کی خدمت کرنے والا معذور بیٹا

بیجنگ 26 اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام) دنیا کا چاہے جو بھی ملک ، ماں کی قدر و منزلت سے انکار نہیں کیا جاسکتا۔ ہر اولاد اپنی ماں کو زیادہ سے زیادہ سکھ پہنچانے کی کوشش کرتی ہے لیکن یہاں 48 سالہ چینی شخص شین ژن ین کی کہانی بڑی عجیب ہے جو خود بھی معذور ہے لیکن اپنی ضعیف والدہ کی خدمت کرنے میں کوئی کسر اٹھا نہیں رکھتا۔ سات سال کی عمر میں اس کے دونوں بازو ایک حادثہ میں ضائع ہوگئے۔ اس کے بعد وہ اپنے بیشتر کام اپنے پیروں کی مدد سے کرتا ہے۔ جنوب مغربی چین کے چانگنگ کا ساکن شین نہ صرف گھر کے تمام کام انجام دیتا ہے بلکہ اپنی ضعیف اور بیمار والدہ کی تیمار داری بھی کرتا ہے جس کی عمر 91 سال ہے۔ دونوں ہاتھ برقی شاک لگنے سے بیکار ہونے کے بعد وہ اپنے جسم کے دیگر اعضاء کا استعمال کرتے ہوئے مختلف کام انجام دیتا ہے۔ ضعیف والدہ کو کھانا کھلانے کے لئے شین دانتوں سے چمچہ پکڑ کر اپنی ماں کے منہ میں غذا پہنچاتا ہے۔ اس کی ضعیف والدہ کے بھی دونوں بازو لقوہ سے بے کار ہوچکے ہیں۔ شین بھینسوں اور مینڈھوں کو چراگاہ لے جاتا ہے جہاں دن بھی چراگاہ میں گزارنے کے بعد وہ گھر آکر تمام کام انجام دیتا ہے۔ ابتداء میں اُسے پیروں سے کام لینے میں کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا اور ایسا کرنے میں وہ ایک بار اپنے پیر زخمی کر بیٹھا۔ جس کا نشان آج بھی اس کے پیر پر موجود ہے۔ اس کے گاؤں کے کئی لوگوں نے اُسے گداگری کا پیشہ اپنانے کا مشورہ دیا لیکن شین ایک خوددار آدمی ہے۔ اس نے ایسا مشورہ دینے والوں کو ڈانٹ دیا۔ بہرحال اُس کے دیگر بھائی اب علیحدہ رہتے ہیں لیکن شین اپنی ضعیف والدہ کے ساتھ رہتے ہوئے ان کی خدمت کو ترجیح دیتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT