Sunday , July 23 2017
Home / ہندوستان / طالب علم کی ہلاکت کیخلاف شوپیان میں ہڑتال جاری

طالب علم کی ہلاکت کیخلاف شوپیان میں ہڑتال جاری

سری نگر 8جون (سیاست ڈاٹ کام ) جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیان میں جمعرات کو مسلسل دوسرے دن بھی مکمل ہڑتال کی گئی جہاں لوگ 6 جون کی شام کو جنگجو مخالف آپریشن کے دوران سیکورٹی فورسز کی فائرنگ سے ایک 19 سالہ نوجوان عادل فاروق ماگرے کی ہلاکت اور متعدد دیگر کو زخمی کرنے کے خلاف برسراحتجاج ہیں۔تاہم ضلع میں آج انتظامیہ کی طرف سے کوئی پابندیاں نافذ نہیں رہیں۔ ضلع کے چند مقامات سے احتجاجیوں اور سیکورٹی فورسز کے مابین جھڑپوں کی اطلاعات بھی موصول ہوئی ہیں۔قصبہ شوپیان میں سنٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) کے دس جوان اس وقت زخمی ہوگئے جب ان کی گاڑی پتھراؤ کی زد میں آنے کی سبب الٹ گئی۔ذرائع نے بتایا کہ نوجوانوں کے ایک گروپ نے سی آر پی ایف اہلکاروں کو لے جارہی ایک گاڑی پر پتھراؤ کیا جس کے سبب وہ ڈرائیور کے قابو سے باہر ہوکر الٹ گئی۔انہوں نے بتایا کہ اس واقعہ میں دس سی آر پی ایف جوان زخمی ہوگئے ہیں جنہیں علاج کیلئے اسپتال منتقل کیا گیا ۔ عادل فاروق کی ہلاکت کے خلاف شوپیان میں جمعرات کو مسلسل دوسرے دن بھی ہڑتال رہی۔
بجلی ،پانی بحران : بی جے پی کا کجریوال کی قیامگاہ پر مظاہرہ
نئی دہلی8جون (سیاست ڈاٹ کام ) دہلی بی جے پی نے آج خطہ میں بجلی اور پانی کے مبینہ بحران کے خلاف دہلی کے وزیراعلی اروند کجریوال کے گھر کے باہر احتجاج کیا۔احتجاج کی قیادت دہلی بی جے پی سربراہ منوج تیواری کررہے تھے وہاں پارٹی والنٹیرز اور دیگر قائدین کی بڑی تعدادجمع تھی وہ کجریوال حکومت کے خلاف نعرے لگارہے تھے ۔پولس کے عملہ نے مجمع پر کنٹرول کے لئے پانی کی بوچھار استعمال کی۔ عام آدمی پارٹی کے خلاف بی جے پی کا احتجاج ایسے وقت ہورہا ہے جب حال ہی میں پارٹی پر اس کے سابق وزیرکپل مشرا نے بدعنوانی کے الزامات لگائے ہیں۔ کجریوال نے اعلان کیا ہے کہ لفٹننٹ گورنر انل بیجال اس بات سے متفق ہوگئے ہیں کہ بجلی فراہم کرنے والی کمپنیوں کو بجلی کی کٹوتی کے لئے معاوضہ دینا چاہئے ۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT