Thursday , August 17 2017
Home / ہندوستان / طلاق ثلاثہ کے خلاف مسلم خاتون سپریم کورٹ سے رجوع

طلاق ثلاثہ کے خلاف مسلم خاتون سپریم کورٹ سے رجوع

جئے پور ۔ 18 مئی (سیاست ڈاٹ کام)ایک مسلم خاتون 25 سالہ آفرین رحمن کو اسپیڈ پوسٹ کے ذریعہ طلاق نامہ موصول ہوا جس کے خلاف وہ سپریم کورٹ سے رجوع ہوئی ہیں۔ انہوں نے اسلام میں ایک ہی وقت میں تین طلاق کے طریقہ کار کو چیلنج کیا۔ آفرین نے کہا کہ 2014ء میں ان کی شادی ہوئی اور دو تا تین ماہ بعد سسرال والوں نے ہراساں کرنا شروع کردیا۔ انہیں زدوکوب کیا گیا۔ وہ مائیکے واپس آ گئی اور انہیں اسپیڈپوسٹ کے ذریعہ طلاق نامہ موصول ہوا۔انہوں نے کہا کہ یہ انتہائی غلط اور ناقابل قبول طریقہ کار ہے۔ واضح رہیکہ مرکز نے ملک میں خواتین کی حالت کا جائزہ لینے کیلئے اعلیٰ سطحی کمیٹی تشکیل دی جس نے مبینہ طور پر طلاق ثلاثہ اور کثرت ازدواج پر امتناع کی سفارش کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT