Saturday , August 19 2017
Home / شہر کی خبریں / طلبا کے خلاف کارروائیوں کی تحقیقات کی جائیں

طلبا کے خلاف کارروائیوں کی تحقیقات کی جائیں

ایمنسٹی انٹرنیشنل کا مطالبہ ۔ مظالم کی آزادانہ تحقیقات پر زور
حیدرآباد 25 مارچ ( سیاست نیوز ) ایمنسٹی انٹرنیشنل انڈیا نے یونیورسٹی آف حیدرآباد میں پرامن احتجاجی طلبا کے خلاف پولیس کی کارروائیوں کی مذمت کی ہے اور مطالبہ کیا ہے کہ انہیں فوری رہا کیا جائے ۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل انڈیا نے کہا کہ یونیورسٹی کیمپس میں 22 مارچ کو پولیس کی جانب سے طاقت کے بے تحاشہ استعمال کی آزادانہ تحقیقات ہونی چاہئیں۔ ایمنسٹی انٹرنیشنل انڈیا کے ایگزیکیٹیو ڈائرکٹر آکار پٹیل نے کہا کہ احتجاج کر رہے طلبا کے خلاف تشدد کا کسی بھی حالت میں کوئی جواز نہیں ہوسکتا ۔ پولیس کی جانب سے خاتون طالبات کے جنسی استحصال اور ان کے ساتھ زیادتیوں کی اطلاعات کی بھی تحقیقات کی جانی چاہئیں اور جو لوگ اس طرح کے حالات کے ذمہ دار ہیں ان کے خلاف قانونی کارروائی کی جانی چاہئے ۔ انہوںنے کہا کہ جو کوئی تشدد اور غیر قانونی کاموں کے مرتکب پائے جائیں ان کے خلاف قانونی کارروائی بین الاقوامی معیار قانون کے مطابق ہونی چاہئے ۔ یونیورسٹی آف حیدرآباد کے 25 طلبا اور دو فیکلٹی ارکان کو گرفتار کرکے مختلف مقدمات کے تحت انہیں جیل بھیج دیا گیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT