Tuesday , October 17 2017
Home / شہر کی خبریں / طلبہ کے کھانے پر سیاست افسوسناک : ایٹالہ راجندر

طلبہ کے کھانے پر سیاست افسوسناک : ایٹالہ راجندر

ہاسٹلس میں غیر معیاری چاول کی سربراہی کے الزامات مسترد ، وزیر فینانس کا بیان
حیدرآباد۔12 اکٹوبر (سیاست نیوز) وزیر فینانس ایٹلہ راجندر نے درج فہرست اقوام و قبائل کے ہاسٹلس کو سربراہ کئے جانے والے چاول میں مبینہ اسکام کے الزامات کو مسترد کردیا۔ میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے ای راجندر نے کہا کہ ملک میں پہلی مرتبہ تلنگانہ ریاست میں سماجی بھلائی کے ہاسٹلس میں طلبہ کو معیاری غذا فراہم کرنے کے مقصد سے باریک چاول سربراہ کیا جارہا ہے۔ چندر شیکھر رائو حکومت کو اس بات کا اعزاز حاصل ہے کہ اس نے کمزور اور پسماندہ طبقات کے طلبہ کی بھلائی کی فکر کی لیکن افسوس کہ اپوزیشن جماعتیں اس اسکیم کے بارے میں بے بنیاد الزامات عائد کررہی ہیں۔ وزیر فینانس نے کہا کہ طلبہ کے کھانے پر بھی سیاست کرنا افسوسناک ہے۔ انہوں نے وضاحت کی کہ ہاسٹلس کو سربراہ کیا جانے والا چاول حقیقی معنوں میں معیاری اور باریک چاول ہے ناکہ پالش کیا ہوا چاول۔ انہوں نے کہا کہ سابق میں کسی بھی حکومت میں سماجی بھلائی ہاسٹل میں باریک چاول کی سربراہی پر توجہ نہیں دی جس کے باعث وہاں مقیم طلبہ غیر معیاری غذا اور کھانوں کے استعمال سے اکثر و بیشتر بیمار ہورہے تھے۔ انہوں نے تلگودیشم قائد ریونت ریڈی پر الزام عائد کیا کہ وہ چاول کی سربراہی میں اسکام کا الزام عائد کرتے ہوئے حکومت کو بدنام کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ راجندر نے سوال کیا کہ تلگودیشم قائد نے کبھی ہاسٹل میں قیام کیا ہے؟ جب وہ کبھی ہاسٹل گئے ہی نہیں تو وہ طلبہ کے مسائل سے کس طرح واقف ہوسکتے ہیں؟ راجندر نے کہا کہ وہ حیدرآباد میں تعلیم کے دوران سماجی بھلائی کے ہاسٹل میں قیام کرچکے ہیں اور وہ طلبہ کے مسائل سے اچھی طرح واقف ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ جب چیف منسٹرکو ہاسٹل کی ابتر صورتحال سے واقف کرایا گیا تو انہوں نے تمام ہاسٹلوں میں باریک چاول سربراہ کرنے کی ہدایت دی۔ تلگودیشم دور حکومت میں کبھی بھی سماجی بھلائی ہاسٹلس کے معیار کو بہتر بنانے پر توجہ نہیں دی گئی۔ انہوں نے شکایت کی کہ سابقہ حکومتوں نے طلبہ کو غیر معیاری غذا سربراہ کی لیکن طلبہ احتجاج نہ کرسکے۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت فلاحی اسکیمات پر عمل آوری میں ملک کی دیگر ریاستوں میں سرفہرست ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہاسٹلوں کو باریک چاول کی سربراہی کے لئے 642 کروڑ روپئے خرچ کئے جارہے ہیں۔ انہوں نے تلگودیشم قائدین کو مشورہ دیا کہ وہ حکومت پر تنقید سے قبل ہاسٹلس کا دورہ کرتے ہوئے حقائق سے واقفیت حاصل کریں۔

TOPPOPULARRECENT