Sunday , August 20 2017
Home / کھیل کی خبریں / ظہیرخان بین الاقوامی کرکٹ سے سبکدوش

ظہیرخان بین الاقوامی کرکٹ سے سبکدوش

ممبئی 15 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے کامیاب ترین بائیں ہاتھ کے فاسٹ بولر ظہیر خان نے آج بین الاقوامی کرکٹ سے فوری طور پر سبکدوشی کا اعلان کردیا ہے۔ ظہیر خان جنھوں نے 2011 ء ورلڈکپ میں ہندوستان کو عالمی چمپئن بنانے میں کلیدی رول ادا کیا تھا، جیسا کہ انھوں نے آئی سی سی کے اِس عالمی ٹورنمنٹ میں پاکستان کے آل راؤنڈ شاہد آفریدی کے ہمراہ مشترکہ طور پر 21 وکٹیں لیتے ہوئے پہلا مقام حاصل کیا تھا۔ علاوہ ازیں ہندوستان کی 92 ٹسٹ مقابلوں میں نمائندگی کے ساتھ 311 وکٹیں اور 200 ونڈے مقابلوں میں 282 وکٹیں حاصل کرتے ہوئے فتوحات میں اہم رول ادا کیا تھا۔ ظہیرآباد نے یہاں منعقدہ ایک پریس کانفرنس میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہاکہ جیسا کہ وہ رواں سیزن آئندہ ٹورنمنٹس کے لئے تیاری میں مشغول تھے لیکن اِن کا کاندھا کافی تکلیف دے رہا ہے اور وہ ایک دن میں بمشکل صرف 18 اوور کرپارہے ہیں۔ لہذا وہ محسوس کرتے ہیں کہ انھیں بین الاقوامی کرکٹ سے سبکدوش ہوجانا چاہئے۔

ظہیر خان نے بین الاقوامی کرکٹ سے سبکدوشی کا اعلان کرنے کے علاوہ یہ بھی کہا ہے کہ وہ آئی پی ایل 9 سیزن کے لئے دستیاب ہیں۔ 2011 ء ورلڈکپ میں ٹیم کی کامیابی میں کلیدی رول ادا کرنے والے ظہیر خان نے اِس موقع پر کہاکہ کسی بھی کھلاڑی کے لئے آسان نہیں ہوتا کہ وہ بین الاقوامی کرکٹ سے کنارہ کشی اختیار کرے جبکہ کھلاڑی تقریباً دو دہے تک ٹیم کا مستقل رکن رہا ہو۔ ظہیر خان کی جانب سے بین الاقوامی کرکٹ سے سبکدوشی کے اعلان کے بعد ہندوستان کے علاوہ بیرون کرکٹ گوشوں سے بھی خراج تحسین کے پیغامات کا ایک سلسلہ شروع ہوچکا ہے جس میں ہندوستانی ٹیم کے سابق ماسٹر بلاسٹر سچن تنڈولکر نے ٹوئٹ کیا ہے کہ ظہیر خان ایک پرسکون فاسٹ بولر تھے جنھوں نے ٹیم کی فتوحات میں اپنی صلاحیتوں کا بھرپور مظاہرہ کیا ہے۔ علاوہ ازیں ہندوستانی کپتان مہندر سنگھ دھونی نے اپنے ٹوئٹ میں کہاکہ ہندوستانی ٹیم کی فتوحات ظہیر خان کی مدد کے بغیر کافی مشکل تھی کیوں کہ ظہیر خان ایک ایسے بولر رہے جو بیٹسمین کے رویہ کے اعتبار سے اپنی بولنگ تبدیل کرتے تھے اور ٹیم کو اہم فتوحات دلواتے تھے۔ ظہیر خان جنھوں نے سال 2000 ء میں بنگلہ دیش کے خلاف اپنے ٹسٹ کرئیر کا آغاز کیا اور 92 مقابلوں میں 32.94 کی اوسط سے 311 وکٹیں حاصل کیں۔ جبکہ 37 سالہ فاسٹ بولر نے 200 ونڈے مقابلوں میں 282 وکٹیں اور 17 ٹوئنٹی 20 مقابلوں میں 17 وکٹیں حاصل کئے ہیں۔ ظہیر خان ہندوستان کے لئے ٹسٹ کرکٹ میں انیل کمبلے (619) ، کپل دیو (434) اور ہربھجن سنگھ (417) کے بعد سب سے زیادہ وکٹیں حاصل کرنے والے بولروں میں چوتھے مقام پر موجود ہیں۔ ظہیر خان نے آخری مرتبہ 2014 ء فروری میں نیوزی لینڈ کے خلاف ویلنگٹن میں اپنا آخری ٹسٹ کھیلا تھا جس کے بعد سے وہ زخموں اور فٹنس مسائل کی وجہ سے مسلسل پریشان رہے۔

TOPPOPULARRECENT