Thursday , September 21 2017
Home / شہر کی خبریں / عازمین حج کو سفر کے دوران احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کا مشورہ

عازمین حج کو سفر کے دوران احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کا مشورہ

تربیتی اجتماع سے پروفیسر ایس اے شکور‘ مولانامفتی تجمل حسین اور مولانا عبید الرحمٰن کا خطاب
حیدرآباد 13 اگست ( پریس نوٹ ) تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی کے زیر اہتمام منتخب عازمین حج کے لئے تربیتی اجتماع آج جامع مسجد حسینی وجئے نگر کالونی روبرو آئی ٹی آئی گلڈ منعقد ہوا ‘ جس میں عازمین حج کی کثیر تعداد شریک تھی۔ اسپیشل آفیسر تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے صدارت کی ۔ انہوں نے عازمین حج کو مفید مشورے دیتے ہوئے کہا کہ اب ان کی روانگی کے لئے بہت ہی کم وقت رہ گیا ہے اس لئے وہ تمام احتیاطی تدابیر اختیار کریں ‘ تاکہ ان کو سفر اور حج کے دوران کسی قسم کی دشواری اور تکلیف پیش نہ آئے۔ انہو ںنے کہا کہ تمام عازمین کو ان کی روانگی کی تاریخ معلوم ہوچکی ہے‘ اور ان کو مقررہ وقت سے 48گھنٹے پہلے حج کیمپ میں رپورٹ کرنا ہے۔ شہر کے عازمین اپنے سامان کے ساتھ فلائیٹ کے وقت سے دس گھنٹے پہلے لازماً حج کیمپ پہنچ جائیں۔ عازمین کو اپنے ساتھ صرف 20کلو وزن کے دو سوٹ کیس رکھنا ہے جبکہ ہینڈ کیری کے طور پر وہ دس کلو تک کا بیاگ رکھ سکتے ہیں جس میں بے حد ضروری چیزیں رکھیں۔ ممنوعہ اشیا ساتھ نہ لے جائیں۔ عازمین کی سہولت کے لئے حج ہاؤزکو منی ایرپورٹ میں تبدیل کیا جاتا ہے جہاں ان کے کسٹمس‘ امیگریشن‘ لگیج چیک‘ فارن ایکسچینج کی کارروائیاں مکمل ہوتی ہیں‘ عازمین کو انکا پاسپورٹ ‘ اور بورڈنگ کارڈ حوالے کیا جاتاہے ۔اور بسوں کے ذریعہ ان کی اور ان کے اسباب کی حج ٹرمنل منتقلی عمل میں آتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ عازمین کو ان کی روانگی سے عین قبل 21ہزار ریال کی رقم دی جاتی ہے تاکہ اس رقم سے وہ وہاں اپنے کھانے پینے اور قربانی کا انتظام کرسکیں۔ اس کے علاوہ ان کو ہندوستانی کرنسی میں 25ہزار روپئے کے علاوہ پانچ ہزار ڈالر کے مماثل فارن ایکسچینج لے جانے کی اجازت ہے۔ مولانا مفتی تجمل حسین امام و خطیب مسجد حسینی نے فضائیل و مناسک حج‘ حج کے فرائض اور واجبات اور احرام کی شرائط سے واقف کروایا۔ انہوںنے کہا کہ حج کی تیاری تین طرح کی ہوتی ہے‘ ایک تو حج کمیٹی کی جانب سے سفر کی تیاری‘ دوسرے مسائل سے واقفیت کی تیاری اور تیسری اور سب سے اہم تیاری دل کو سنوارنے اور پاک و صاف ہوکر جانے کی تیاری ہے۔ انہوں نے عازمین کو مشورہ دیا کہ وہ اپنا ظاہر و باطن سنواریں اور سرکار کے روضہ پر حاضری کے وقت ایسی شکل میںجائیں جو رسول پاک ﷺ کو پسند ہو۔ انہو ں نے کہا کہ سرکار دو عالم ﷺ کی جو خواہش ہے ‘ اس کے سامنے دنیاکے کروڑوں لوگوں کی رائے کی کوئی حیثیت نہیں ہے۔ مولانا احمد عبیدالرحمٰن اطہر امام و خطیب مسجد ٹین پوش نے عازمین کو مشورہ دیا کہ وہ فضول باتوں میں وقت برباد نہ کریں‘ فون اور فوٹو گرافی سے گریز کریں ‘ سفر پر روانگی سے قبل سب کے حقوق ادا کرکے جائیں۔ جناب اشفاق علی حسامی نے ا حرام باندھنے کا طریقہ سمجھایا ۔ حافظ شوکت حسین کی قرأت کلام پاک اور حافظ عبدالرحمن کے ہدیہ نعت سے جلسہ کا آغاز ہوا۔ جناب عبدالرؤف خان انجنیئر نے کارروائی چلائی۔ جناب عرفان شریف اے ای او حج کمیٹی‘ جناب میر برکت علی خان صدر ‘ جناب میر انور محی الدین ‘ جناب فاروق حسین اور دوسروں نے انتظامات کی نگرانی کی۔

TOPPOPULARRECENT