Sunday , October 22 2017
Home / شہر کی خبریں / عازمین حج کی سیکوریٹی کے لیے حیدرآباد پولیس چوکس

عازمین حج کی سیکوریٹی کے لیے حیدرآباد پولیس چوکس

حج ہاوز کا معائنہ ، نقائص کی نشاندہی ، آندھرا پردیش کے عازمین کے تحفظ کا مسئلہ
حیدرآباد۔/22جولائی، ( سیاست نیوز) عازمین حج کے تحفظ اور انھیں سیکورٹی فراہم کرنے کے بارے میں مرکزی حکومت کی جانب سے تمام ریاستوں کو چوکس کرنے کے بعد حیدرآباد پولیس متحرک ہوچکی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ مرکزکی جانب سے چیف سکریٹریز کو خفیہ مکتوب کی روانگی کے بعد متعلقہ حکومتوں نے پولیس کو چوکس کردیا تاکہ حج سیزن کے آغاز سے طیاروں کی روانگی تک عازمین حج کی صیانت و حفاظت کو یقینی بنانے کی ہدایت دی گئی۔ پولیس کو حکومت کی جانب سے اڈوائزری جاری کئے جانے کے بعد حیدرآباد پولیس نے حج کیمپ کے مقام کا معائنہ کیا۔ بتایا جاتا ہے کہ نامپلی حج ہاوز کی عمارت اور کیمپ کے انعقاد کیلئے استعمال کی جانے والی کھلی اراضی اور زیر تعمیر کامپلکس کا جائزہ لینے کے بعد مقامی پولیس نے تلنگانہ حج کمیٹی کے حکام کو بتایا کہ کھلی اراضی میں بیرونی راستہ کیلئے 2 چھوٹے گیٹ انتہائی خستہ حالت میں ہیں انہیں تبدیل کیا جائے یا پھر اس راستہ کو مستقل طور پر بند کیا جائے تاکہ عازمین حج کی صیانت کو یقینی بنایا جاسکے۔ بتایا جاتا ہے کہ پولیس کا سیکورٹی عملہ آئندہ ماہ 11 اگسٹ سے شروع ہونے والے حج کیمپ کے انتظامات کے سلسلہ میں تیاریوں میں مصروف ہوچکا ہے۔ پولیس کے عہدیدار اس سلسلہ میں حج کمیٹی کے عہدیداروں سے ربط میں ہیں۔ اسی دوران عازمین حج کی صیانت کے سلسلہ میں مرکزی حکومت کی جانب سے چوکسی کے باوجود آندھرا پردیش حج کمیٹی کا رویہ غیر ذمہ دارانہ دکھائی دے رہا ہے۔ حکومت نے عازمین حج کی مکانات سے روانگی سے لیکر سعودی عرب پرواز تک ہر قدم پر مناسب سیکورٹی فراہم کرنے کی ہدایت دی ہے لیکن آندھرا پردیش حج کمیٹی نے اپنے عازمین کو حج کیمپ کے بجائے حج ہاوز کے اطراف کی ہوٹلوں میں قیام کی سہولت فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ہوٹلوں میں قیام کرنے والے عازمین کی صیانت کو کس طرح یقینی بنایا جائے گا جبکہ اس عمارت میں کوئی بھی شخص باآسانی داخل ہوسکتا ہے۔ ہوٹلوں میں قیام کرنے والے عازمین اکثر و بیشتر خریداری کے سلسلہ میں گھومتے دکھائی دیتے ہیں لیکن اس مرتبہ حج کمیٹیوں کو مشورہ دیا گیا کہ وہ عازمین حج کے کھلے عام گھومنے پر روک لگائیں۔ حج ہاوز کے اندرونی اور بیرونی حصوں میں غیر متعلقہ افراد کی سرگرمیوں پر نظر رکھی جائے۔ واضح رہے کہ امر ناتھ یاتریوں پر دہشت گرد حملہ، اتر پردیش میں بی جے پی رکن اسمبلی کی جانب سے سفر حج میں رکاوٹ کی دھمکی اور گاؤ رکھشکوں کی سرگرمیوں کو دیکھتے ہوئے مرکزی وزارت اقلیتی اُمور نے تمام ریاستوں کے چیف سکریٹریز کو عازمین حج کی صیانت کے انتظامات کے سلسلہ میں مکتوب روانہ کیا۔

TOPPOPULARRECENT