Saturday , August 19 2017
Home / شہر کی خبریں / عازمین حج کے میڈیکل سرٹیفیکٹ کے تعلق سے ضروری وضاحت

عازمین حج کے میڈیکل سرٹیفیکٹ کے تعلق سے ضروری وضاحت

کسی بھی ایم بی بی ایس ڈاکٹر سے سرٹیفیکٹ حاصل کیا جاسکتا ہے ، پروفیسر ایس اے شکور
حیدرآباد ۔ 12 ۔ اپریل : ( پریس نوٹ) : اسپیشل آفیسر تلنگانہ اسٹیٹ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے ایک بیان میں وضاحت کی ہے کہ عازمین حج کو پاسپورٹ کے ہمراہ ایک عدد کلر فوٹو گراف اور میڈیکل اسکریننگ اور فٹنس سرٹیفیکٹ اور حج مصارف کی رقم کی رسید بھی 23 اپریل سے قبل دفتر ریاستی حج کمیٹی میں جمع کروانا ہوگا ۔ میڈیکل اسکریننگ اور فٹنس سرٹیفیکٹ کے تعلق سے اکثر عازمین حج میں الجھن پائی جاتی ہے ۔ لیکن ان کو اس تعلق سے فکر مند ہونے کی کوئی ضرورت نہیں ہے ۔ انہوں نے تمام منتخب عازمین حج سے خواہش کی ہے کہ وہ حج مصارف کی پہلی قسط کی رقم فی کس مبلغ 81 ہزار روپئے جمع کروانے کے بعد بینک چالان کی رسید کے ہمراہ اپنا اصل پاسپورٹ اور میڈیکل اسکریننگ اور فٹنس سرٹیفیکٹ دفتر حج کمیٹی میں داخل کریں ۔ انہوں نے وضاحت کی کہ میڈیکل اسکریننگ اینڈ فٹنس سرٹیفیکٹ کا مقررہ نمونہ حج کمیٹی کی جانب سے عازمین حج کو درخواست فارم کے جو بک لیٹ سربراہ کئے گئے ہیں اس کے صفحہ نمبر 21 پر موجود ہے اور صرف اسی کی فوٹو کاپی کروا کے ڈاکٹر سے سرٹیفیکٹ حاصل کریں ۔ اس کے علاوہ سرٹیفیکٹ کا نمونہ دفتر حج کمیٹی سے یا حج کمیٹی کی ویب سائٹ سے حاصل کیا جاسکتا ہے ۔ عام نوعیت کے سرٹیفیکٹ قابل قبول نہیں ہوں گے ۔ اس نمونہ کے مطابق میڈیکل سرٹیفیکٹ حاصل کرنا بہت ہی آسان ہے اور اس میں کسی قسم کی پیچیدگی نہیں ہے ۔ میڈیکل سرٹیفیکٹ پر ڈاکٹر کا نام ، رجسٹریشن نمبر مکمل پتہ اور مہر کے ساتھ دستخط ہونے چاہئیں اور ساتھ ہی اس پر عازمین حج کے دستخط بھی ہونے چاہئیں ۔ پروفیسر ایس اے شکور نے کہا کہ محفوظ زمرہ کے عازمین نے اگر پاسپورٹ پہلے ہی جمع کروادیا ہو تو وہ اب صرف بینک چالان کی رسید اور میڈیکل اسکریننگ اینڈ فٹنس سرٹیفیکٹ جمع کروائیں ۔ منتخب عازمین حج 81 ہزار روپئے کی رقم حج کمیٹی کی ویب سائٹ hajcommittee.gov.in پر آن لائن جمع کرواسکتے ہیں یا پھر وہ اسٹیٹ بینک آف انڈیا میں حج کمیٹی کے اکاونٹ نمبر 32175020010 FEE TYPE-25 میں یا یونین بینک آف انڈیا کے اکاونٹ نمبر 318702010406009 (Haj Account) میں کسی بھی ایسی برانچ میں جہاں کور بینکنگ کی سہولت موجود ہو جمع کروائیں ۔ پروفیسر ایس اے شکور نے کہا ہے کہ دوسری قسط کی رقم کا تعین اور اعلان بعد میں کیا جائے گا اور عازمین کے منتخب کردہ زمرہ یعنی گرین یا عزیزیہ کے مطابق ان کو دوسری قسط کی رقم جمع کرنی ہوگی ۔۔

TOPPOPULARRECENT