Monday , October 23 2017
Home / کھیل کی خبریں / عالمی نمبر ایک نوواک جوکووچ کی یو ایس اوپن کے کوارٹرفائنل میں رسائی

عالمی نمبر ایک نوواک جوکووچ کی یو ایس اوپن کے کوارٹرفائنل میں رسائی

نیویارک۔ 7 ۔ ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) عالمی نمبر ایک نوواک جوکووچ متواتر 26 ویں گرانڈ سلام کوارٹر فائنل میں پہنچ گئے ہیں۔ انہوں نے یو ایس اوپن میں 2011 چمپین کو 6-3 ، 4-6 ، 6-4 ، 6-3 سے ہرادیا۔ اب ان کا مقابلہ اسپین کے فیلیکیانو لوپیز سے ہوگا اور یہ ان کا بھی 9 واں یو ایس اوپن ہے۔ جوکووچنے دوسرے سیٹ میں 4-2 کی سبقت حاصل کی اور فوری بریک کے ذریعہ 23 سیڈیڈ اگوٹ کو سنبھلنے کا موقع نہیں دیا جو سابقہ جونیئر فٹبالر بھی ہیں۔ سربیائی جوکووچ کو ایک مرحلہ میں اگوٹ نے بہترین سرویس کے ذریعہ پیچھے کردیا تھا لیکن انہوں نے فوری کھیل پر قابو پالیا اور میچ کو اپنے حق میں کرلیا۔ اس کھیل میں کئی ایسے مراحل بھی آئے جب مقابلہ کافی سخت ہوگیا تھا اور ایسا لگ رہا تھا کہ فیصلہ کسی کے بھی حق میں ہوسکتا ہے ۔ چنانچہ جوکووچ نے بعد ازاں کہا کہ انہیں اس مقابلہ میں کافی محنت کرنی پڑی اور یہ بہت زبردست میچ رہا۔ انہوں نے جہاں 42 کامیاب شاٹس کھیلے وہیں 37 غلطیاں بھی کیں۔ انہوں نے کہا کہ دوسرے سیٹ میں 5-2 بریک کیلئے ان کے پاس پوائنٹس تھے لیکن وہ اس کا فائدہ نہیں اٹھا سکے تھے۔ 33 سالہ لوپیز پہلی مرتبہ 14 ویں کوشش میں یو ایس اوپن کے کوارٹر فائنل  میں پہنچے تھے ۔ انہوں نے اٹلی کے فیبیو فوگنینی کو 6-3 ، 7-6 (7/5) ، 6-1 سے ہرایا تھا۔ جوکووچنے کہا کہ لوپیز کوئی معمولی کھلاڑی نہیں ہے۔ 18 ویں سیٹ لوپیز نے کہاکہ جوکووچ کے ساتھ مقابلہ اچھا رہا لیکن وہ گیم پر حاوی رہے۔ انہوں نے کہا کہ یو ایس اوپن کے کوارٹر فائنل تک رسائی حاصل کرتے ہوئے انہیں اچھا محسوس ہورہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دیانتداری کی بات تو یہ ہے کہ جب نوواک اچھا کھیلتے ہیں تو پھر یہ پتہ نہیں چلتا کہ مجھے کیا کرنا چاہئے ۔ ان کی گیم میں کسی طرح کی خامی نہیں ہوتی۔ دوسری طرف سرینا اور وینس ولیمس بھی یو ایس اوپن کے کو ارٹر فائنل میں پہنچ چکی ہیں۔ انہوں نے راست سیٹوں میں کامیابی حاصل کرتے ہوئے یہ رسائی حاصل کی جبکہ کینیڈا کی یوگنی  بوشرڈ نے چوتھے راؤنڈ کے میچ سے دستبرداری اختیار کرلی۔ عالمی نمبر ایک سرینا ولیمس نے بہترین سرویس کی اور تین میچس میں متواتر کامیابی کے بعد آج بھی امریکی 19 ویں سیڈس میڈیسن کیز کو 6-3 ، 6-3 سے ہرایا۔ سرینا نے جہاں 6 غیر ارادی غلطیاں کیں وہیں کیز نے 19 غلطیاں کیں ہیں۔ سرینا نے کہا کہ ان کی سرویس مزید بہتر ہوئی ہے اور وہ اس پر فخر محسوس کرتی ہیں۔ میری کوشش یہی ہوتا ہے کہ کھیل کی شروعات تیزی کے ساتھ کی جائے اور پھر وہ اس پر قائم رہتی ہیں جس کے بعد انہیں بہتر نتیجہ بھی حاصل ہوتا ہے۔ وینس نے جو 23 سیڈیڈ ہیں، 152 ویں رینک کی اسٹونیائی کھلاڑی اینیٹ کونٹیوٹ کو 6-2 ، 6-1 سے ہرایا۔ اس سے پہلے وہ 2010 ء یو ایس اوپن کے سیمی فائنل تک پہنچی تھیں۔ وینس نے کہاکہ ہم دونوں ہی ایک اچھے مقابلہ کے لئے تیار تھے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر بہن کے خلاف یہ مقابلہ ہو تو تیاری ضروری ہوتی ہے اور اس معاملہ میں کوتاہی نہیں کی جاسکتی۔ سرینا ولیمس نے 4 بڑے ٹینس ٹائیٹلس جیت لئے ہیں اور وہ پہلا کیلینڈر گرانڈ سلامس مکمل کرنے کی کوشش میں ہیں لیکن وینس جو سرینا سے دو سال کی چھوٹی ہیں، ان کے منصوبہ کو ناکام بھی بناسکتی ہیں۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT