Tuesday , August 22 2017
Home / کھیل کی خبریں / عامر کو دورہ انگلینڈ کے موقع پر تمام احکام کی پابندی کی ہدایت

عامر کو دورہ انگلینڈ کے موقع پر تمام احکام کی پابندی کی ہدایت

سینئر بورڈ عہدیداروں کی فاسٹ بولر سے شخصی ملاقات ۔ صبر و تحمل سے کام لینے کی بھی تلقین
کراچی 12 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) پاکستان کرکٹ بورڈ کے اعلی عہدیداروں نے سابق سزا یافتہ فاسٹ بولر محمد عامر سے کہا ہے کہ وہ دورہ انگلنیڈ کے موقع پر اچھا رویہ رکھیں اور ٹیم انتظامیہ ‘ انسداد کرپشن اور سکیوریٹی مینیجر کی ہر ہدایت پر عمل آوری کریں۔ ایک سینئر عہدیدار نے بتایا کہ عامر کو برطانوی ویزا کی اجرائی کی توثیق کے فوری بعد صدر نشین شہریار خان ‘ نجم سیٹھی اور چیف آپریٹنگ آفیسر سبحان احمد نے لاہور میں عامر سے ملاقات کی اور انہیں تفصیلی ہدایات دی گئیں۔ محمد عامر اسپاٹ فکسنگ کے الزام میں پانچ سال امتناع کی سزا پوری کرچکے ہیں۔ عہدیدار نے کہا کہ ملاقات کے دوران محمد عامر سے واضح طور پر کہا گیا ہے کہ انہیں ہر ہدایت اور احکام کی پابندی اور تعمیل کرنی چاہئے جو انہیں ٹیم انتظامیہ ‘ اینٹی کرپشن اور سکیوریٹی مینیجر کی جانب سے دی جائے ۔ انہیں مینیجر کی جانب سے اجازت کے بغیر میڈیا سے بھی بات چیت سے روک دیا گیا ہے ۔ بتایا گیا ہے کہ محمد عامر سے کہا گیا ہے کہ انہیں دورہ انگلینڈ کے موقع پر نامساعد صورتحال کا سامنا کرنا کیلئے بھی ذہنی طور پر تیار رہنا چاہئے کیونکہ کوئی بھی ہجوم کو یا راستہ چلنے والوں کو کنٹرول نہیں کرسکتا اور عامر کو صبر و تحمل سے کام لینے کی ضرورت ہوگی ۔ عامر کو سلمان بٹ اور محمد آصف کے ساتھ 2010 کے پاکستانی ٹیم کے دورہ انگلینڈ کے دوران اسپاٹ فکسنگ کا مرتکب قرار دیا گیا تھا اور انہیں برطانیہ میں بھی سزا کا سامنا کرنا پڑآ تھا ۔ پاکستان کرکٹ بورڈ نے مختلف ذرائع اور چینلس کو استعمال کرتے ہوئے انگلینڈ اینڈ ویلس کرکٹ بورڈ اور اسلام آباد میں برطانوی ہائی کمیشن کو کامیاب ترغیب دی تھی کہ عامر کو ویزا جاری کیا جائے ۔ پاکستان بورڈ سے واضح طور پر یہ کہدیا گیا تھا کہ اس دورہ میں سلمان بٹ اور محمد آصف کا خیر مقدم نہیں کیا جائیگا ۔ عامر سے کہا گیا ہے کہ وہ اپنے ساتھی کھلاڑیوں سے بھی خوشگوار مراسم بنانے خود ہی پہل کریں تاکہ ڈریسنگ روم کا ماحول بھی بہتر ہوسکے ۔

TOPPOPULARRECENT