Saturday , June 24 2017
Home / سیاسیات / عام آدمی پارٹی لیڈر کو جان سے مارنے کی دھمکی

عام آدمی پارٹی لیڈر کو جان سے مارنے کی دھمکی

دائیں بازو کی شدت پسند تنظیموں کے خلاف سپریم کورٹ میں درخواست
نئی دہلی۔24 مئی (سیاست ڈاٹ کام) عام آدمی پارٹی لیڈر اشیش کھیتاں نے آج سپریم کورٹ میں ایک درخواست داخل کی اور الزام عائد کیا کہ دائیں بازو کی تنظیموں کی جانب سے ان کی جان کو خطرہ ہے۔ انہیں جان سے مارنے کی دھمکیاں دی جارہی ہے۔ انہوں نے عدالت سے درخواست کی کہ وہ ان کی زندگی کا تحفظ کرے۔ سپریم کورٹ پر ووکیشن بنچ نے جو جسٹس ایل ناگیشور رائو اور نوین مہتا پر مشتمل تھی۔ اس کیس کی سماعت 5 جون مقرر کی ہے۔ ایڈوکیٹ سنیل فرنانڈیز نے عدالت کے سامنے اس کیس کی فوری سماعت کے لیے قرار دیا تھا۔ کیتھان جو ڈائیلاگ اینڈ ڈیولپمنٹ کمیشن آف دہلی کے نائب صدرنشین ہیں نے اپنی درخواست میں دائیں بازو تنظیموں پر پابندی کا مطالبہ کیا ہے۔ سناتھن سنستا نامی یہ تنظیم انہیں جان سے مارنے کی دھمکی دے رہی ہے اور انہوں نے اس تنظیم کے خلاف سی بی آئی تحقیقات کرانے کا بھی مطالبہ کیا۔ سی بی آئی تحقیقات سپریم کورٹ کی نگرانی میں ہونی چاہئے۔ اس درخواست کو سینئر ایڈوکیٹ کپل شرما نے پیش کیا اور کئی دائیں بازو تنظیموں کی جانب سے مبینہ جان سے مارنے کی دھمکیاں دیئے جانے کی شکایت کی۔ درخواست گزار نے یہ بھی کہا کہ دائیں بازو کی انتہاپسند تنظیموں میں سناتھن سنستھا ابھینو بھارت، ہندو جاگرن سمیتی، ہندی رکھشک سمیتی، بجرنگ دل درگا واہنی،سری رام سینا اور وشواہندو پریشد ہیں۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT