Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / عثمانیہ ہاسپٹل کے مقام پر جدید بلڈنگ قائم کرنے چیف منسٹر کا فیصلہ

عثمانیہ ہاسپٹل کے مقام پر جدید بلڈنگ قائم کرنے چیف منسٹر کا فیصلہ

میڈون ہاسپٹل میں انفیکشن فری پروگرام ، ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کا خطاب
حیدرآباد /3 اگست ( سیاست نیوز ) ڈپٹی چیف منسٹر تلنگانہ مسٹر محمد محمود علی نے کہا کہ احتیاط علاج سے بہتر ہے اور تندرستی ہزار نعمت ہے جبکہ صحت کے بغیر انسان کی زندگی اجیرن ہے ۔ اسی لئے عوام اور سماج کے تمام طبقات پر ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ اپنے اطراف و اکناف کے ماحول کو صاف ستھرا اور پاک و صاف رکھیں ۔ وہ آج میڈون ہاسپٹلس کے زیر اہتمام مرکزی حکومت کے ’’ سوچھ بھارت اینڈ سواستھ بھارت کے بیانر تلے منعقدہ ’’ انفکشن کنٹرول اینڈ انفیکشن فری ہاسپٹل ‘‘ پروگرام کی اختتامی تقریب میں بطور مہمان خصوصی مخاطب تھے ۔ انہوں نے میڈون ہاسپٹلس کی جانب سے ہاسپٹل کو انفیکشن سے پاک بنانے کیلئے پروگرام انتظامیہ کی ستائش پر ریاست کے تمام ہاسپٹلس تک اس کو وسعت دینے کی ضرورت پر زور دیا تاکہ ریاست بھر کی عوام میں صاف صفائی اور احتیاطی اقدامات برتنے سے متعلق شعور کو بیدار کیا جاسکے ۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر تلنگانہ نے ریاست کے عوام کو سرکاری دواخانوں میں جدید عصری ٹکنالوجی سے لیس طبی سہولتوں اور مریضوں کو بہتر سے بہتر علاج کی فراہمی کا فیصلہ کیاہے اور اسی غرض سے چیف منسٹر نے عثمانیہ جنرل ہاسپٹل کے مقام پر 4 تا 5 ہزار بستروں پر مشتمل جدید طرز کے عصری ٹکنالوجی سے لیس وسیع و عریض ہاسپٹل کی جدید بلڈنگ کی تعمیر کا فیصلہ کیا ہے تاکہ ریاست کے غریب اور متوسط ایسے طبقات جو کارپوریٹ ہاسپٹلس میں اپنے علاج کی سکت نہیں رکھنے کارپوریٹ ہاسپٹلس کی طرز پر ان کو علاج کی سہولت مہیا کی جاسکے ۔ حکومت نے ریاست کے عوام کو گندگی سے پھیلنے والے امراض سے محفوظ رکھنے کی غرض سے حفظ ماتقدم کے طور پر ڈسٹ بینوں کی تیاری کیلئے آرڈر دیا ہے ۔ رکن اے پی پی ایس سی ڈاکٹر محمد علی رفعت نے انفیکشن کنٹرلو ، انفیکشن فری پروگرام کی ستائش کی اور کہا کہ امراض سے محفوظ رہنے کیلئے احتیاطی تدابیر انتہائی لازمی ہیں ۔ انہوں نے میڈون ہاسپٹل کی کارکردگی پر اظہار اطمینان کیا ۔ آر آئی او بورڈ آف انٹرمیڈیٹ ایجوکیشن تلنگانہ مسٹر اے روی کمار نے پروگرام کی ستائش کی اور انہو ںنے ڈپٹی چیف منسٹر پر زور دیا کہ وہ میڈون ہاسپٹلس میں پیرامیڈیکل کورسیس کے داخلوں کیلئے اقدامات کریں ۔ میڈیکل ڈائرکٹر میڈون ہاسپٹلس ڈاکٹر محمد سمیع اللہ خان نے ہاسپٹل ایکوائرڈ انفیکشن اور دیگر انفیکشن سے ہونے والی اموات پر تفصیلی روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ 75 فیصد بیماریاں ہاتھوں کو صاف نہ دھونے کی وجہ سے آتی ہیں ۔ اس لئے ہر شخص کو ہر روز کم از کم 5 مرتبہ صابن سے ہاتھ دھونا چاہئے ۔ چیف ایکزیکیٹیو آفیسر میڈون ہاسپٹلس ڈاکٹر شریمتی سریناگی بی راؤ ، ڈاکٹر دھنا لکشمی نے بھی مخاطب کیا ۔ قبل ازیں اس موقع پر میڈون ہاسپٹلس میں منعقدہ ایک ماہی انفیکشن کنٹرول انفیکشن فری پروگرام کے دوران مختلف امور حصہ لیتے ہوئے اپنی بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے میڈون عملہ میں ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کے ہاتھوں انعامات اور توصیف نامے تقسیم کئے گئے ۔ قبل ازیں کلچرل پروگرام بھی پیش کیا گیا ۔

TOPPOPULARRECENT