Wednesday , September 20 2017
Home / Top Stories / عدم رواداری کی بڑھتی فضاء کے خلاف احتجاج میں شدت

عدم رواداری کی بڑھتی فضاء کے خلاف احتجاج میں شدت

اروندھتی رائے، کندن شاہ، سعید مرزا سمیت 25 شخصیتوں نے قومی ایوارڈ واپس کردیا
ممبئی ۔ 5 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) اروندھتی رائے، کندن شاہ، سعید مرزا کے علاوہ دیگر 22 شخصیتوں نے ملک میں بڑھتی عدم رواداری کی فضاء کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے اپنے قومی ایوارڈس کو واپس کردیا۔ فلم اینڈ ٹیلی ویژن انسٹیٹیوٹ آف انڈیا کے طلباء کے احتجاج کی تائید کرتے ہوئے ان شخصیتوں نے حکومت کے خلاف آواز اٹھائی ہے۔ عدم رواداری کے خلاف مصنفین نے احتجاجی قدم اٹھایا تھا، جس کے بعد سے کئی نامور و ممتاز شخصیتوں نے بھی اپنے ایوارڈس واپس کرنے کا اعلان کیا۔ کئی ادیبوں اور مصنفین نے اپنے ساہتیہ اکیڈیمی ایوارڈس کو واپس کرکے اظہارخیال آزادی کو سلب کرنے کے واقعات کے خلاف احتجاج کیا۔ ملک میں حالیہ دنوں میں 3 دانشوروں کے قتل کے خلاف بھی یہ احتجاج شدت اختیار کرتا جارہا ہے۔ بعض سائنسدانوں اور دیگر کئی فلمی شخصیتوں نے جن میں بالی ووڈ ڈائرکٹر دیباکر بنرجی اور ڈاکومنٹری فلمیں بنانے والے آنند میٹ وردھن بھی اس احتجاج میں شامل ہوگئے تھے۔ ان حضرات نے عدم رواداری اور دانشوروں کے قتل کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے حکومت کی عدم کارکردگی پر اپنی ناراضگی ظاہر کی تھی۔ کندن شاہ نے فلم ٹی وی انسٹیٹیوٹ آف انڈیا کے رکن کی حیثیت سے کہا کہ وہ اپنے واحد نیشنل ایوارڈ کو واپس کررہے ہیں جو انہیں ان کی فلم جانے بھی دو یار کیلئے ملا تھا۔ اس ایوارڈ کو واپس کرتے ہوئے انہیں صدمہ ہورہا ہے

لیکن یہ فیصلہ کرنا ضروری ہے کیونکہ ملک میں عدم رواداری کے بڑھتے واقعات کے علاوہ ایف ٹی آئی آئی کے چیرمین کی حیثیت سے گجیندر چوہان کے تقرر کے خلاف احتجاج ہورہا ہے۔ کندن شاہ نے مزید کہا کہ قومی ایوارڈس بڑی مشکل سے ملتے ہیں تاہم جب خلاف توقع حالات پیدا ہوں تو سخت ترین فیصلے کرنا پڑتا ہے۔ سعید مرزا نے بھی کہا کہ ایوارڈس واپس کررہے ہیں جو انہیں ان کی البرٹ پنٹو کو غصہ کیوں آتا ہے اور ٹی وی شو نکڑ کیلئے ملے تھے۔ انہوں نے ایف ٹی آئی آئی کے سابق چیرمین کی حیثیت سے اچھے کام انجام دیئے ہیں۔ ان کی زندگی کی شروعات طالب علم کی حیثیت سے ہوئی تھی اور اسے وہ یہاں تک پہنچے ہیں ملک میں نفرت اور عدم رواداری کا ماحول افسوسناک حد تک بڑھ گیا ہے۔ جب فلم انسٹیٹیوٹ کے طلباء نے چیرمین کے تقرر کے خلاف آواز اٹھائی تھی کچھ کارروائی نہیں کی گئی حکومت ہند طلباء کے احتجاج کو نظرانداز کررہی ہے۔ اروندھتی رائے نے بھی اپنا قومی ایوارڈس واپس کردیا۔

TOPPOPULARRECENT