Monday , August 21 2017
Home / عرب دنیا / عدن میں داعش کا خودکش حملہ، 14 سپاہی ہلاک

عدن میں داعش کا خودکش حملہ، 14 سپاہی ہلاک

عدن ۔ 17 ۔ فروری (سیاست ڈاٹ کام) یمن کے شہر عدن میں ایک خودکش بمبار حملہ میں کم سے کم 14 سپاہی ہلاک ہوگئے۔ اس جنگ زدہ ملک کے دوسرے بڑے شہر میں یہ تازہ ترین حملہ ہے ، جس کی ذمہ داری جہادی تنظیم داعش نے قبول کی ہے۔ جنوبی بندرگاہ کا یہ شہر صدر عبد ربو اور منصور ہادی کے وفادار سپاہیوں اور سعودی عرب کے زیر قیادت فوجی اتحاد کا ہیڈکوارٹر ہے  لیکن حالیہ عرصہ کے دوران اس شہر میں داعش اور اس کی حریف تنظیم القاعدہ کے تشدد میں اضافہ دیکھا گیا ہے ۔ فوجی ذرائع نے کہا کہ ایک شخص نے سپاہیوں کے درمیان پہنچ کر خود کو دھماکہ سے اڑالیا۔ جب سعودی زیر قیادت اتحاد کے تحت سوڈانی فوج کی جانب سے یمنی سپاہیوں کو تربیت دی جارہی تھی۔ خود کش بمبار بھی سپاہی کے بھیس میں وہاں پہنچ گیا اور مغربی عدن کے راس عباس کیمپ پر حملہ کردیا۔ اس سے ایک دن قبل القاعدہ نے عدن کے گورنر اور پولیس کے سربراہ کے قافلہ پر حملہ کی ذمہ داری قبول کی تھی جس میں 4 جہادی ہلاک ہوگئے تھے۔ گزشتہ سال مارچ کے دوران سعودی عرب کے زیر قیادت صدر منصور ہاد کی تائید میں فوجی مداخلت کے آغاز کے بعد داعش اور القاعدہ نے اپنی پر تشدد کارروائیوں میں اضافہ کردیا ہے ۔

 

شامی ہاسپٹل پر بمباری میں مہلوکین کی تعداد 25 ہوگئی
بیروت ۔  17 ۔ فروری (سیاست ڈاٹ کام) شام کے ایک امدادی گروپ نے کہا ہے کہ شمال مغربی علاقہ کے ایک ہاسپٹل پر بمباری میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد 25 تک پہنچ گئی ہے۔ گروپ کی ایک خاتون ترجمان نے کہا کہ قبل ازیں مہلوکین کی تعداد 11 بتائی گئی تھی لیکن مہلوکین میں ہاسپٹل اسٹاف کے 9 ارکان اور دیگر 16 افراد شامل ہیں۔

TOPPOPULARRECENT