Monday , September 25 2017
Home / ہندوستان / عسکریت پسندوں کی ہلاکت کے خلاف ہڑتال، عام زندگی مفلوج

عسکریت پسندوں کی ہلاکت کے خلاف ہڑتال، عام زندگی مفلوج

کشمیر میں تعلیمی ادارے و انٹرنیٹ بند۔ سڑکوں پر ٹریفک بھی متاثر۔ اضافی دستوں کی تعیناتی
سری نگر 18جولائی (سیاست ڈاٹ کام ) جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ میں لشکر طیبہ سے وابستہ تین مقامی عسکریت پسندوں کی ہلاکت کے خلاف منگل کے روز مکمل ہڑتال کی گئی جس سے نظام زندگی مکمل طور پر مفلوج ہوکر رہ گئی۔ ضلع بھر میں منگل کو انتظامیہ کے احکامات پر تمام تعلیمی ادارے بند رہے ۔ اس کے علاوہ موبائیل انٹرنیٹ خدمات بھی معطل رہی۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق ضلع بھر میں عسکریت پسندوں کی ہلاکت کے خلاف دکانیں اور تجارتی مراکز بند رہے جبکہ سڑکوں پر گاڑیوں کی آمد و رفت معطل رہی۔سرکاری دفاتر اور بینکوں میں بھی معمول کا کام کاج متاثر رہاکیونکہ سڑکوں پر گاڑیوں کی عدم موجودگی کی وجہ سے بیشتر ملازمین اپنے دفاتر و پہنچ نہیں پائے ۔ ہڑتال کے دوران اننت ناگ کے چند مقامات بشمول مومن آباد اور دیالگام سے احتجاجیوں اور سیکورٹی فورسز کے مابین جھڑپوں کی اطلاعات موصول ہوئیں۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ضلع میں امن وامان کی صورتحال کو بنائے رکھنے سیکورٹی فورسز کی اضافی نفری تعینات کی گئی ہے ۔انہوں نے بتایا کہ ضلع کے تمام اسکولوں اور کالجوں میں آج مجسٹریٹ کے احکامات پر تعطیل رہی۔ اس کے علاوہ ضلع میں موبائیل انٹرنیٹ خدمات بھی معطل کردی گئی ہیں۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ تعلیمی اداروں اور موبائیل انٹرنیٹ خدمات کو بند رکھنے کے اقدامات احتیاطی طور پر اٹھائے گئے ہیں۔ خیال رہے کہ ضلع اننت ناگ کے بلبل نوگام علاقہ میں گذشتہ رات ہونے والے ایک مختصر مسلح تصادم میں لشکر طیبہ سے وابستہ تین جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا۔

ٹیکسٹائیل پر جی ایس ٹی میں کمی ناممکن : جیٹلی
نئی دہلی۔ 18 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) حکومت نے ٹیکسٹائیل شعبہ میں جی ایس ٹی کی شرح میں کٹوتی کے کسی امکان کو مسترد کردیا اور کہا کہ کپڑوں پر صفر فیصد جی ایس ٹی سے گھریلو صنعت میں محصول پر قرض کے سلسلہ کی کھپت کا سلسلہ متاثر ہوگا جس سے درآمد شدہ اشیاء سستی ہوجائیں گی۔ پارچہ پر عائد 5 فیصد جی ایس ٹی سے دستبرداری کے مطالبہ کے ساتھ گجرات میں جاری احتجاج کے درمیان وزیرفینانس ارون جیٹلی نے راجیہ سبھا میں کہا کہ یہ کہنا درست نہیں ہیکہ آزاد ہندوستان میں ٹیکسٹائیل کے شعبہ پر بھی کوئی ٹیکس عائد نہیں کیا گیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT