Thursday , August 17 2017
Home / بچوں کا صفحہ / عظیم فلسفی سقراط

عظیم فلسفی سقراط

سقراط جو دنیا کا پہلا عظیم فلسفی شمار کیا جاتا ہے، اس نے کوئی کتاب نہیں لکھی۔ اس کی وجہ یہ تھی کہ وہ لکھنا نہیں جانتا تھا۔ سقراط انتہائی بدصورت تھا، اس کے ایک شاگرد نے اس کی مثال ایک ایسے مجسمے سے دی ہے جو اوپر سے تو نہایت مضحکہ خیز نظر آتا ہے، لیکن اس کے اندر فرشتہ ہوتا ہے۔ سقراط پیشے کے لحاظ سے مجسمہ ساز تھا۔ سقراط کبھی پیسے کمانے کے بارے میں سنجیدہ نہیں ہوا، اسی لئے اس کی بیوی جو بہت چڑچڑی تھی‘ ہمیشہ اس سے لڑتی رہتی تھی۔ سقراط نے نوجوانی میں میدانِ جنگ میں بہادری کا انعام حاصل کیا۔ سقراط کی قوت برداشت کمال کی تھی۔ سارے شہر میں وہی ایک تھا جو ننگے پیر برف پر گھومتا رہتا تھا۔
بادشاہ کی خطاطی
شمس الدین التمش کا لڑکا ناصر الدین محمود بادشاہ ہونے کے باوجود دریشانہ زندگی بسر کرتا تھا۔ وہ اپنے ذاتی اخراجات کا بوجھ شاہی خزانے پر نہیں ڈالتا تھا۔ اسے خطاطی میں مہارت حاصل تھی۔ وہ خطاطی ہی سے اپنی کفالت کرتا تھا۔ ایک بار کسی امیر نے اس کے ہاتھ کی لکھی ہوئی خطاطی دیکھی اور یہ سوچ کر اس کی قیمت معمول سے کچھ دے دی کہ یہ بادشاہ کے ہاتھ کی لکھی ہوئی ہے۔ ناصر الدین کو یہ واقعہ معلوم ہوا تو اسے ناگوار گزرا۔ اس کے بعد وہ اپنی خطاطی خفیہ طور پر بازار میں بھیجنے لگا تاکہ وہی معاوضہ ملے جو عام خطاطوں کو ملتا تھا۔

TOPPOPULARRECENT