Sunday , August 20 2017
Home / ہندوستان / عوامی شعبہ کے بینکوں کے سرفہرست 100 قرضداروں سے 14 لاکھ کروڑ وصول طلب

عوامی شعبہ کے بینکوں کے سرفہرست 100 قرضداروں سے 14 لاکھ کروڑ وصول طلب

نئی دہلی۔ 10 اگست (سیاست ڈاٹ کام)مرکزی حکومت نے یہ انکشاف کیا ہے کہ عوامی شعبہ کے بینکوں کے سرفہرست 100 قرض داروں سے تقریباً 14 لاکھ کروڑ روپئے وصول طلب ہیں۔ مملکتی وزیر فینانس سنتوش کمار گنگوار نے راجیہ سبھا میں یہ بات بتائی۔ 31 مارچ 2016ء تک 100 بڑے قرض داروں سے وصول طلب رقم 13,71,885 کروڑ روپئے ہوگئی ہے۔ علاوہ ازیں عوامی شعبہ کے بینکوں کے غیرکارکرد اثاثہ جات سال 2013-14ء میں 2.16 لاکھ کروڑ روپئے سے سال 2015-16ء میں 4.76 لاکھ کروڑ روپئے تک پہنچ گئی ہیں۔ ریزرو بینک آف انڈیا جوکہ قرضوں کی وصولی کے طریقہ کار کا جائزہ لے رہا ہے، عوامی شعبہ کے بینکوں کو قرضوں کی وصولی اور مروجہ نظام میں بہتری، غیرکارکرد اثاثوں کی نشاندہی کیلئے منصوبہ عمل تیار کیا ہے تاکہ وصول طلب قرضوں کے مسئلہ کا حل تلاش کیا جاسکے۔ مرکزی وزیر نے بتایا کہ غیرکارکرد اثاثہ جات میں سب سے زیادہ انفراسٹرکچر، اسٹیل اور ٹیکسٹائل سے متعلق ہیں۔

TOPPOPULARRECENT