Friday , August 18 2017
Home / اضلاع کی خبریں / عید ملاپ تقاریب سے فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور یکجہتی کو فروغ

عید ملاپ تقاریب سے فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور یکجہتی کو فروغ

سدی پیٹ۔ 28 جولائی (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ہندوستان ایک ایسا گہوارہ ہے جہاں پر کئی مذاہب کے لوگ شیر و شکر کی طرح زندگی گذارتے ہیں جس کے باعث یہاں کی تہذیب ، تمدن و روایات عالمی سطح پر مشہور ہیں۔ بالخصوص تلنگانہ کی تہذیب اور بھی منفرد ہے۔ ہندوستان میں مختلف مذاہب کے لوگ عید و تہوار اپنے روایتی انداز میں مناتے ہیں اور ایک دوسرے کی خوشیوں میں شامل رہتے ہیں۔ یہی عید و تہوار علاقہ واری سطح پر انفرادیت رکھتے ہیں۔ ایسی ہی کچھ مثال ضلع میدک کے سدی پیٹ شہر کی ہے جہاں پر کسی بھی مذہب کے عید و تہوار کے مواقع جب میسر آتے ہیں تو لوگ دیگر کی خوشیوں میں اپنے کو شامل کرتے ہیں۔ کسی قسم کی کوئی کسر نہیں چھوڑتے۔ گزشتہ روز سدی پیٹ کے این جی اوز بھون میں سدی پیٹ حج کمیٹی کے زیراہتمام منعقدہ روایتی عید ملاپ تقریب منعقد کی گئی۔ اس پروگرام کے مہمان خصوصی وزیر آبپاشی مسٹر ٹی ہریش راؤ جو سدی پیٹ کے رکن اسمبلی بھی ہیں، ان کے ہمراہ وزیر برقی مسٹر جگدیشور ریڈی نے شرکت کی۔ اس تقریب کی انفرادیت یہ تھی کہ مسلم اور غیرمسلم احباب اپنے روایتی ملبوسات زیب تن کئے ہوئے تھے۔ جلسہ کا آغاز تلاوت قرآن حکیم سے ہوا۔ ٹی ہریش راؤ نے خطاب کرتے ہوئے مسلمانوں کو عید کی مبارکباد پیش کی اور خوشنودی کا اظہار کیا۔ وزیر موصوف نے کہا کہ اس طرح کی تقاریب سے امن و امان اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی، یکجہتی اور دوستی کا ماحول بڑھے گا اور مختلف فرقوں کے درمیان میل ملاپ میں اضافہ ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ ماضی میں 21 سال قبل اس طرح کی تقریب کے انعقاد کی بنیاد ٹی آر ایس پارٹی کے چیف منسٹر مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے ڈالی تھی۔ سدی پیٹ میں جب سے آج تک یہ تقاریب ہر سال پابندی کے ساتھ منعقد کی جارہی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ٹی آر ایس برسراقتدار آنے کے بعد سے برقی سربراہی میں کسی قسم کی کوتاہی نہیں کی گئی۔ انہوں نے کہا کہ مستقبل میں برقی صارفین کو کسی بھی قسم کی شکایت نہیں ہوگی۔ انہوں نے اپنی تقریر کے دوران کہا کہ حکومت تلنگانہ ریاست میں 120 اقامتی مدارس کھولنے کی تجویز رکھتی ہے جس میں سے ایک اسکول سدی پیٹ میں بھی قائم کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ ایک کروڑ روپئے کی لاگت سے سدی پیٹ میں حج ہاؤز قائم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ عمارت کی تعمیر کے بعد سدی پیٹ کے اطراف و اکناف کے عازمین کو سہولتیں دستیاب رہے گی۔ مسٹر جگدیشور ریڈی وزیر برقی نے سدی پیٹ میں اس تقریب پر مسرت کا اظہار کیا اور کہا کہ چیف منسٹر تلنگانہ کی خوشحالی امن و امان ، تہذیب و تمدن کے حامل ورثے کی برقراری کیلئے کوشاں ہیں۔ عبدالقادر صدر ملت اسلامیہ سوسائٹی نے مخاطب کرتے ہوئے برسراقتدار ٹی آر ایس حکومت کی جانب سے ریاست تلنگانہ کے عوام بالخصوص اقلیتوں کے متعلق حکومت کے اقدامات کی ستائش کی۔ نظام الدین سوسائٹی کی کارکردگی اور مستقبل میں کئے جانے والے کاموں کا تفصیلی جائزہ لیا۔ صدر جلسہ غوث محی الدین نے ابتداء میں تقریب کا انعقاد کا مقصد بیان کیا اور شرکاء میں عید کی مبارکباد پیش کی۔ عبدالصبور نے مہمانان خصوصی کے علاوہ شرکاء میں عطر پیش کیا۔ محمد حبیب الدین نے جلسہ کی کارروائی چلائی اور وزیر موصوف سے اقبال بھون کا مطالبہ کیا۔ تقریب کا اختتام منفرد طریقے سے ہوا جہاں پر منتظمین نے شرکاء میںشیر خورمہ پیش کیا۔ جلسہ کی سرپرستی بابا شرف الدین مسعود اور علیم الدین سرور نے کی۔ مہمانوں کا خیرمقدم عبداللطیف، محمود، نذیرالدین، بصیرالدین لاڈلے نے کیا اور گلپوشی کی۔ یوسف الدین نے شکریہ ادا کیا۔ اس تقریب میں ہندو۔ مسلم و سرکاری لوگوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔

TOPPOPULARRECENT