Saturday , September 23 2017
Home / شہر کی خبریں / غذائی اجناس کی اجرائی میں حکومت کی سرد مہری

غذائی اجناس کی اجرائی میں حکومت کی سرد مہری

غریب راشن کارڈ گیرندے راشن سے محروم ، ایم سرینواس سی پی آئی قائدکا بیان
حیدرآباد ۔ 22 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز) : کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا ( مارکسٹ ) گریٹر حیدرآباد جنرل سکریٹری ایم سرینواس نے محکمہ سیول سپلائی کے تحت تقسیم کیے جانے والے غذائی اجناس میں غریب اور معاشی طور پر پسماندگی کا شکار طبقات کے ساتھ ناانصافی کا حکومت تلنگانہ پر الزام عائد کیا ۔ آج یہاں پارٹی دفتر میں منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سرینواس ریڈی نے کہا کہ ایک سازش کے تحت پانچ لاکھ سے زائد اناپورنا اور پسماندہ طبقات کے لیے جاری کئے جانے والے راشن کارڈس منسوخ کردئیے گئے ہیں جس سے غریب عوام راشن سے محروم ہوگئی ہے ۔ سرینواس ریڈی نے مزید کہا کہ جہاں راشن کارڈس منسوخ کردئیے گئے وہیں حکومت نے سبسیڈی والے راشن کارڈس پر دستیاب غذائی اجناس میں بھی تخفیف کردی ہے جو قابل افسوس ہے ۔ ٹی آر ایس حکومت کے اقتدار میں آنے کے بعد ایک بھی نیا راشن کارڈ جاری نہیں کیا گیا جبکہ گریٹر حیدرآباد میں تین لاکھ سے زائد سفید راشن کارڈس کی درخواستیں زیر التواء ہیں ۔ سرینواس ریڈی نے آر ٹی آئی سے موصول انفارمیشن کے مطابق تین لاکھ درخواست گذار پچھلے کئی ماہ سے راشن سے محروم ہیں ۔ انہوں نے سیول سپلائی اڈوائزری کمیٹی کے قیام کو تعطل کا شکار بنانے کا حکومت پر الزام عائد کیا اور کہا کہ ماضی میں تمام سیاسی جماعتوں کی نمائندگی پر یہ کمیٹی تشکیل دی جاتی تھی جس کا مقصد سیول سپلائی محکمہ جات کے علاوہ راشن شاپس پر ہونے والی دھاندلیوں کی روک تھام کرنا ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT