Tuesday , October 24 2017
Home / شہر کی خبریں / غریبوں کیلئے امکنہ اسکیم میں تیزی لانے چیف منسٹر کی ہدایت

غریبوں کیلئے امکنہ اسکیم میں تیزی لانے چیف منسٹر کی ہدایت

کلکٹرس و اعلی عہدیداروں کے ساتھ جائزہ اجلاس‘ ہر اسمبلی حلقہ میں 400 مکانات کی تعمیر
حیدرآباد 13 اکٹوبر ( آئی این این ) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے عہدیداروں سے کہا ہے کہ وہ پسماندہ طبقات کے ہاوزنگ پروگرام کے کاموں میں تیزی پیدا کریں تاکہ ضرورت مند خاندانوں میں دو بیڈروم والے مکانات فراہم کئے جاسکیں۔ چیف منسٹر نے اضلاع کے کلکٹرس ‘ جوائنٹ کلکٹرس اور سپرنٹنڈنٹس پولیس کے ساتھ آج ایک جائزہ اجلاس منعقد کیا ۔ انہوں نے عہدیداروں سے کہا کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ ہاوزنگ اسکیم پر کسی بے قاعدگی کے بغیر عمل آوری ہوسکے ۔ انہوں نے یہ واضح کیا کہ ہاوزنگ اسکیم سے کم از کم دو نسلوں کو فائدہ ہوگا ۔ ریاستی حکومت اس اسکیم پر عمل آوری میں کسی طرح کے کرپشن اور بے قاعدگیوں کو برداشت نہیں کریگی ۔ چندر شیکھر راؤ نے کہا کہ سابقہ حکومتیں غیربوں کو شہر کے باہر ڈربے نما رومس فراہم کیا کرتی تھی تاہم موجودہ ٹی آر ایس حکومت ٹاؤنس کے پانچ کیلومیٹر کے احاطہ ہی میں غربا کو دو بیڈروم ‘ ہال کچن والے مکانات فراہم کریگی اور ان میں دو باتھ رومس رہیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ ہر اسمبلی حلقہ میں پائلٹ بنیادوں پر 400 مکانات تعمیر کئے جائیں گے ۔ انہوں نے بتایا کہ مقامی رکن اسمبلی کی جانب سے 50 فیصد مکانات کے الاٹمنٹ کی سفارش کی جاسکتی ہے جبکہ مابقی پچاس فیصد استفادہ کنندگان کا ضلع انچارچ وزیر انتخاب عمل میں لائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ ریاستی حکومت جاریہ معاشی سال کے دوران 60,000 مکانات تعمیر کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے ۔ ان میں 36,000 مکانات دیہی علاقوں میں اور 24,000 مکانات شہری علاقوں میں تعمیر کئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ دیہی علاقوں میں ہر مکان کی تعمیر پر 5.04 لاکھ روپئے اور شہری علاقوں میں ہر مکان کی تعمیر پر 5.30 لاکھ روپئے خرچ کئے جائیں گے ۔ چیف منسٹر نے ضلع کلکٹرس کو ہدایت دی کہ وہ ہاوزنگ اسکیم کیلئے مناسب اراضی کی نشاندہی کریں ۔ انہوں نے بتایا کہ پسماندہ طبقات ہاوزنگ اسکیم کیلئے ریتی اور دوسرے ساز و سامان کی منتقلی میں رعایت دی آئیگی ۔ چیف منسٹر نے کہا کہ سابقہ حکومتوں میں ہاوزنگ اسکیمات کرپشن اور رشوت کا دوسرا نام بن گئی تھیں۔ صرف ایک سال میں 5000 کروڑ روپئے کا اسکام ہوا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ اس اسکام کے سلسلہ میں تقریبا 300  عہدیداروں کو معطل کیا گیا تھا اور کئی عہدیدار جیل بھی روانہ کئے گئے تھے ۔ چندر شیکھر راؤ نے کہا کہ اس اسکیم پر عمل آوری کی ذمہ داری ضلع کلکٹر کو دی جائیگی اور تمام منتخبہ استفادہ کنندگان کو تحصیلدار سے سرٹیفیکٹ حاصل ہوگا ۔ ڈپٹی چیف منسٹر ( ریوینیو ) محمد محمود علی نے افتتاحی خطاب کیا اور کئی سینئر عہدیداروں نے اجلاس میں شرکت کی ۔

TOPPOPULARRECENT