Thursday , May 25 2017
Home / شہر کی خبریں / غریب عوام اور کسانوں کے ساتھ انصاف رسانی تک جدوجہد جاری رکھنے کا عزم

غریب عوام اور کسانوں کے ساتھ انصاف رسانی تک جدوجہد جاری رکھنے کا عزم

جی او 38 کی اجرائی کا خیر مقدم ، کانگریس کی کامیابی کا ادعا ، صدر تلنگانہ پی سی سی اتم کمار ریڈی کی پریس کانفرنس
حیدرآباد ۔ 16 ۔ فروری : ( سیاست نیوز ) : تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی نے حصول اراضیات کے لیے حکومت کی جانب سے جاری کردہ جی او 38 کو کانگریس کی جزوی کامیابی قرار دیتے ہوئے غریب عوام اور کسانوں سے مکمل انصاف تک جدوجہد جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے ۔ آج شام گاندھی بھون میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کیپٹن اتم کمار ریڈی نے یہ بات بتائی ۔ اس موقع پر سابق رکن پارلیمنٹ انجن کمار یادو ، تادیبی کارروائی کمیٹی کے صدر نشین ایم کودنڈا ریڈی کے علاوہ دوسرے موجود تھے ۔ کیپٹن اتم کمار ریڈی نے کہا کہ کانگریس پارٹی کا حصول اراضیات کے معاملے میں قومی اور ریاستی سطح پر ایک ہی موقف ہے ۔ اس میں کوئی تبدیلی نہیں ہے ۔ کانگریس پارٹی ترقی اور اراضیات کو پانی سیراب کرنے کے خلاف نہیں ہے ۔ مگر مختلف بہانوں سے غریب عوام بالخصوص سماج کے تمام طبقات اور کسانوں سے زبردستی اراضی حاصل کرنے کے خلاف ہے ۔ تلنگانہ کی تحریک میں آندھرائی حکمرانوں پر پانی ، فنڈز اور ملازمتوں میں تلنگانہ سے نا انصافی کرنے کا ٹی آر ایس نے الزام عائد کیا تھا اور ان تینوں چیزوں کو تحریک کا حصہ بنایا تھا تاہم اقتدار حاصل کرنے کے بعد ٹی آر ایس حکومت آبپاشی پراجکٹس کے سارے کام آندھرائی کنٹراکٹرس کو دیتے ہوئے تلنگانہ کے کنٹراکٹرس کے ساتھ نا انصافی کررہی ہے ۔ سیکشن 144 نافذ کرتے ہوئے غریب عوام کی زبردستی اراضی حاصل کررہی ہے ۔ حصول اراضیات کے لیے پارلیمنٹ میں بل منظور ہوا ہے ۔ اس کا احترام کرنے اور اسی قانون کے تحت اراضیات حاصل کرنے کے بجائے جی او 125 جاری کرتے ہوئے غریب عوام سے زبردستی اراضیات چھین لی جارہی ہے ۔ کانگریس نے اس کے خلاف جدوجہد کی ہے ۔ حکومت کی جانب سے اپنے فیصلے پر نظر ثانی نہ کرنے پر ہائی کورٹ سے بھی رجوع ہوئی ہے ۔ ہائی کورٹ میں بھی ریاستی حکومت کو پھٹکار ملی ہے ۔ ٹی آر ایس حکومت کی نصف میعاد مایوس کن ہے ۔ ڈبل بیڈ روم مکانات ، دلت طبقات کو 3 ایکڑ اراضی ، مسلمانوں اور قبائلی طبقات کو 12 فیصد تحفظات نہیں ملے طلبہ کی فیس ری ایمبرسمنٹ اور اسکالر شپس کے بقایا جات جاری نہیں ہوئے ہر سال لاکھوں ملازمتیں فراہم کرنے کا وعدہ بھی پورا نہیں کیا گیا ۔ حکومت کی کارکردگی سے سماج کا کوئی بھی طبقہ مطمئن نہیں ہے ۔۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT