Saturday , September 23 2017
Home / شہر کی خبریں / غریب مسلم طلبہ میں نوٹ بکس کی تقسیم ، عنقریب مفت ڈائیلاسیس سنٹرس کا قیام

غریب مسلم طلبہ میں نوٹ بکس کی تقسیم ، عنقریب مفت ڈائیلاسیس سنٹرس کا قیام

وقف بورڈ کی آمدنی کو منشائے وقف کے مطابق فلاح و بہبود پر خرچ کرنے کا عزم ، الحاج محمد سلیم
حیدرآباد۔ 24 جولائی (سیاست نیوز) وقف بورڈ کی آمدنی سے غریب مسلمانوں کی تعلیمی اور طبی امداد کے سلسلے میں اقدامات کا آغاز ہوچکا ہے۔ صدرنشین وقف بورڈ محمد سلیم نے آج پرانے شہر کے تین خانگی اسکولوں کے غریب مسلم طلباء میں نوٹ بکس کی تقسیم عمل میں لائی۔ انہوں نے اعلان کیا کہ اندرون ایک ہفتہ مختلف اسکولوں کے طلبہ میں 50,000 نوٹ بکس کی تقسیم عمل میں آئے گی۔ اس کے علاوہ آئندہ سال سے طلبہ میں ٹیکسٹ بکس اور اسکولی بیاگس کی تقسیم کا منصوبہ ہے۔ صدرنشین کی حیثیت سے جائزہ لینے کے بعد محمد سلیم نے اعلان کیا تھا کہ وہ بورڈ کی آمدنی کو منشائے وقف کے مطابق مسلمانوں کی فلاح و بہبود پر خرچ کریں گے۔ انہوں نے نوٹ بکس کی تقسیم کے ذریعہ اپنے اس منصوبہ پر عمل آوری کا آغاز کیا۔ انہوں نے اعلان کیا کہ بہت جلد حج ہاؤز میں کسی مناسب مقام پر فری ڈائیلاسیس سنٹر قائم کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ گردے سے متعلق امراض میں اضافہ کے پیش نظر غریب مسلمانوں کو ڈائیلاسس کیلئے بھاری رقومات خرچ کرنی پڑ رہی ہے۔ اس بوجھ کو کم کرنے کیلئے انہوں نے فری ڈائیلاسس سنٹر کے قیام کا فیصلہ کیا ہے۔ ڈائیلاسس یونٹ کی خریدی کے سلسلے میں ماہرین سے مشاورت کی جائے گی۔ محمد سلیم نے غریب طلبہ میں نوٹ بکس کی تقسیم کیلئے پہلے مرحلے میں 50,000 بکس حاصل کئے اور آج شاہ جیلان ایجوکیشنل سوسائٹی کنچن باغ، سینٹ سلیمان ہائی اسکول حسن نگر اور کریسنٹ اسکول کے طلبہ میں 2,000 نوٹ بکس تقسیم کئے گئے۔ انہوں نے کہا کہ باقی کتابیں بھی اندرون ایک ہفتہ تقسیم کردی جائیں گی۔ انہوں نے کہا کہ غریب مسلم خاندانوں میں بچوں کو بہتر تعلیم کی فراہمی کے سلسلے میں مشکلات کا سامنا ہے۔ تعلیمی اخراجات کی پابجائی مسلمان گھرانوں کے لئے ایک مسئلہ بن چکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ سال سے نصابی کتب اور بیاگس کے علاوہ غریب طلبہ کی اسکولی فیس بھی ادا کی جائے گی۔ محمد سلیم نے کہا کہ صدرنشین کے عہدہ پر فائز ہونے کے بعد انہوں نے یہ عہد کیا تھا کہ وقف بورڈ کو غریبوں کی فلاح و بہبود سے مربوط کریں۔ انہوں نے کہا کہ وہ بیواؤں کیلئے وظائف اور مفت علاج کیلئے ہاسپٹل کے قیام کی تجویز رکھتے ہیں۔ خانگی اسکولوں کے اساتذہ اور طلبہ نے صدرنشین محمد سلیم کی ستائش کی اور کہا کہ وقف بورڈ کی آمدنی کو غریبوں پر خرچ کرتے ہوئے منشائے وقف کی تکمیل کی جارہی ہے۔ چیف ایگزیکٹیو آفیسر ایم اے منان فاروقی نے بتایا کہ خانگی اسکولوں کے انتظامیہ ، وقف بورڈ سے نوٹ بکس کے سلسلے میں رجوع ہوسکتے ہیں بشرطیکہ ان کے پاس غریب اور مستحق طلبہ موجود ہوں۔ وقف بورڈ تمام ضروری معلومات کے بعد ہی نوٹ بکس کی تقسیم عمل میں لائے گا۔ انہوں نے کہا کہ صدرنشین وقف بورڈ محمد سلیم کے ملی جذبہ کی ہر سطح پر ستائش کی جارہی ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT