Wednesday , August 23 2017
Home / سیاسیات / غنڈہ گردی کو جانبداری کے بغیر کچل دیں گے: یوپی ڈی جی پی

غنڈہ گردی کو جانبداری کے بغیر کچل دیں گے: یوپی ڈی جی پی

عوام کیلئے سکیورٹی اور خواتین کی سلامتی کو یقینی بنانا پولیس سسٹم کی ترجیح ، سولکھن سنگھ کے تاثرات
لکھنؤ 22 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) اترپردیش کے نئے پولیس سربراہ سولکھن سنگھ نے آج عزم کیاکہ ریاست میں غنڈہ گردی کو کچل دیں گے اور انتباہ دیا کہ اِس معاملہ میں وی آئی پی لوگوں کو تک بخشا نہیں جائے گا۔ اُنھوں نے کہاکہ اُن کی ترجیح غیر جانبدارانہ پولیس سسٹم کو یقینی بنانا رہے گی۔ 1980 ء بیاچ کے آئی پی ایس آفیسر نے اپنے عزائم کے اظہار میں الفاظ کی رعایت کے بغیر کہاکہ جو بھی غنڈہ گردی اور مجرمانہ سرگرمیوں میں ملوث ہیں، اُن سے نرمی کے بغیر نمٹا جائے گا۔ وہ فرار نہیں ہوسکتے اور وی آئی پیز کو بھی نہیں بخشا جائے گا۔ وہ یوپی ڈائرکٹر جنرل آف پولیس کی حیثیت سے سبکدوش جاوید احمد سے جائزہ حاصل کرنے کے بعد میڈیا والوں سے بات چیت کررہے تھے۔ جاوید کو کم اہمیت کے حامل ڈی جی، پی اے سی عہدہ کو منتقل کردیا گیا۔ یہ یوگی ادتیہ ناتھ حکومت کی جانب سے گزشتہ شب اعلیٰ پولیس حکام میں پہلی بڑی ردوبدل ہوئی ہے۔ ریاست میں سینئر ترین آئی پی ایس آفیسر سولکھن سنگھ نے کہاکہ عام آدمی کے لئے سکیورٹی کو یقینی بنانے میں کوئی مفاہمت نہیں ہوگی۔ کوئی بھی کچھ غلط کرے تو یکساں کارروائی کی جائے گی۔ کچھ جانبداری نہ ہوگی چاہے خاطی کوئی بھی ہو اور کچھ بھی سیاسی وابستگی رکھتا ہو۔ جب یہ نشاندہی کی گئی کہ اُن کے پاس طویل میعاد نہیں ہے کیوں کہ اُن کی وظیفہ پر سبکدوشی رواں سال کے اواخر ہونا ہے، سولکھن سنگھ نے کہاکہ مجھے اِسی مدت کے دوران میری اہلیت ثابت کرنا ہوگا۔ وہ محکمہ پولیس میں کئی اصلاحات لانے کے ذمہ دار رہے ہیں۔ پولیس مشنری میں جابجا کرپشن کے الزامات سے متعلق ایک سوال پر اُنھوں نے کہاکہ تمام معاملوں کی منصفانہ انکوائری کی جائے گی۔ ڈی جی پی نے کہاکہ اُن کی مقدم ترجیح پولیس سسٹم کو خیرسگالی بنانا رہے گی۔ پولیس کا کام غیر جانبداری سے ہونا چاہئے اور مقصد عام آدمی کے لئے راحت کو یقینی بنانا رہے۔ڈی جی پی کی حیثیت سے اُن کی ترجیح خواتین کی حفاظت و سلامتی بھی رہے گی جنھیں کوئی بھی وقت گھر میں ہو کہ باہر ہو سلامتی کا احساس ہونا چاہئے۔

TOPPOPULARRECENT