Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / غیر ملکی باشندوں کے خلاف کارروائی ،غیر قانونی قیام پر چار افراد گرفتار

غیر ملکی باشندوں کے خلاف کارروائی ،غیر قانونی قیام پر چار افراد گرفتار

حیدرآباد 14 اگست (سیاست نیوز ) حیدرآباد سٹی پولیس نے ایک بڑی کارروائی میں چار ایسے افراد کو گرفتار کرلیا جو غیر قانونی طور پر ملک میںمقیم تھے ۔ ان چار افراد میں دو بنگلہ دیشی ایک پاکستانی اور ایک میانمار کا باشندہ بتایا گیا ہے ۔ مشتبہ طور پر ان کا رابطہ ممنوعہ دہشت گرد تنظیم ہوجی سے پایا جاتا ہے ۔ پولیس نے ایک خفیہ اطلاع پر کارروائی کے بعد چنچل گوڑہ علاقہ سے ان چار افراد بشمول ایک ایجنٹ مسعود علی خان ساکن چنچل گوڑہ کو گرفتار کرلیا جو انہیں ہندوستانی پاسپورٹ کی تیاری میں مدد کررہا تھا ۔ یہ بات ایک پریس کانفرنس کے دوران مسٹر پربھاکر راو جوائنٹ کمشنر آف پولیس سی ایس نے بتائی ۔ انہوں نے بتایا کہ ساوتھ زون کی ٹاسک فورس نے 13 اگست کے دن افراد کو چنچل گوڑہ علاقہ سے گرفتار کرلیا ۔ انہوں نے بتایا کہ محمد ناصر ‘فاضل محمد ‘زین العابدین اور ضیاء الرحمان کو گرفتار کیاگیا اس کے علاوہ مسعود علی خان ساکن چنچل گوڑہ اور سہیل پرویز خاں ساکن بالا پور کو بھی پولیس نے گرفتار کرلیا اور ان کے قبضہ سے ووٹر شناختی کارڈ ‘آدھار کارڈ اور ہندوستانی پاسپورٹ کو ضبط کرلیا ۔ ناصر جو بنگلہ دیشی نژاد ہے پاکستان منتقل ہوگیا تھا جبکہ فاضل اور زین العابدین بنگلہ دیشی اور ضیاء الرحمان میانمار کا باشندہ بتایا گیا ہے ۔ جوائنٹ کمشنر کے مطابق دلسکھ نگر بم دھماکہ میں ملوث وقاص کو بنگلہ دیش فرار کروانے میں ناصر کا اہم رول رہا ہے جو ہو جی کے سرکردہ دہشت گرد عبدالبار کا قریبی ساتھی بتایا گیا ہے ۔ ناصر سے ملاقات کے بعد عبدالجبار نے اسے ہندوستان روانہ کیا تھا تا کہ یہاں غیر قانونی سرگرمیاں انجام دی جاسکیں ۔ ناصر سال 2010 میں لیہہ۔ بنگلہ سرحد کے ذریعہ ملک میں داخل ہوا تھا اور یہ لوگ مارچ کے مہینہ میں جل پلی علاقہ منتقل ہوئے تھے ۔ اس سے قبل یہ لوگ پانی پت اور مظفر نگر کے علاقوں میں مقیم تھے۔ ناصر نے بالا پور علاقہ کے ساکن سہیل پرویز خان سے ملاقات کی جوپیشہ سے ٹیچر ہے اور اس کی مدد سے مسعود خاں سے رابطہ قائم کیا ۔ مسعود خان چنچل گوڑہ علاقہ میں ایک زیراکس سنٹر چلایا کرتا ہے ۔ حالیہ دنوں ناصر کی ملاقات غیر قانونی طور پر مقیم تین افراد فاضل ‘زین العابدین اور ضیاء الرحمان سے ہوئی۔ پولیس نے بتایا کہ مسعود علی خان کی مزید 15 افراد کو پاسپورٹ تیار کرنے میں مدد کرتے ہوئے دستاویزات فراہم کئے تھے۔ پولیس ان 15 افراد کی تحقیقات میں جٹ گئی ہے جو غیر قانونی مقیم افراد تھے ۔ حیدرآباد سٹی پولیس ہر زاویہ سے اس کیس کی تحقیقات میں مصروف ہے اور معاملہ کو اسپیشل انویسٹی گیشن ٹیم کے حوالے کردیا گیا ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT