Wednesday , August 16 2017
Home / اضلاع کی خبریں / فرقہ پرستوں کے خلاف آہنی شکنجہ ضروری

فرقہ پرستوں کے خلاف آہنی شکنجہ ضروری

اتحاد و اتفاق پر زور ‘ نارائن پیٹ میں عیدملاپ پروگرام ‘ مسلم و غیر مسلم دانشوروں کا خطاب

نارائن پیٹ ۔ 9 ؍ جولائی ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) عوام کی جان و مال کی حفاظت کی ذمہ داری دستوری عہدہ حلف اٹھانے والوں کی ہے ۔ زبانی بیان بازی کے ذریعہ اپنی ذمہ داریوں سے چشم پوشی دراصل ذمہ داریوں سے راہ فرار مانی جائے گی ۔ جناب محمد اظہرالدین سکریٹری رابطہ عامہ جماعت اسلامی ہند تلنگانہ نے نارائن پیٹ میں جماعت اسلامی کی جانب سے پولے پلی فنکشن ہال میں منعقدہ عید ملاپ ‘ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ۔ انہوں نے کہا ملک کی ترقی کے لئے ملک میں امن و امان ضروری ہے ۔ آج چند فرقہ پرست طاقتیں ملک کے امن و امان کو درہم برہم کرنے کے درپے ہیں ۔ ان کے خلاف آہنی شکنجہ کی ضرورت ہے ۔ ملک میں شراب پر پابندی عائد کرنے کا بھی انہوں نے مطالبہ کیا اور کہا کہ یہ ام الخبائث ہے ۔ افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ نشہ کی لعنت اب ڈرگس کی شکل میں شہروں کے نامی گرامی اسکول اور کالج میں پہنچ چکی ہے ۔ نئی نسل کو ڈرگس اور سیل فون کے مسلسل استعمال سے بچانے کی ضرورت پر زور دیا ۔ ایس راجندر ریڈی رکن اسمبلی نارائن پیٹ نے کہا کہ اتحاد و اتفاق اس ملک کی ترقی کے لئے ضروری ہے ۔ جماعت اسلامی کاان کوششوں کی انہوں نے سراہنا کی ۔ شریمتی ڈی کے ارونا رکن اسمبلی گدوال نے اپنے والد آنجہانی سی نرسی ریڈی کی جماعت اسلامی کے اجلاسوں میں شرکت اور وابستگی کو یاد کیا اور کہاکہ نارائن پیٹ میں ہندو مسلم اتحاد مثالی نمونہ ہے جس کی مثال ملنا مشکل ہے ۔ جناب عبدالصمد العمودی اسلامک ریسرچ اسکالر عثمانیہ یونیورسٹی نے مسلمانوں پر ملک بھر میں ہونے والے حملوں کے پس منظر میں کہا کہ ارباب اقتدار شرپسندوں کے خلاف صرف زبانی جمع خرچ سے کام لے رہے ہیں ۔ امن امان کو بگاڑنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی ضرورت ہے ۔ سوامی شانتانند پروہت ‘ شکتی پیٹھم نے کہا کہ اتحاد و اتفاق صرف زبانی دعوں تک محدود نہ رہے بلکہ اس کو عمل میں بھی لانے کی ضرورت ہے ۔ محمد صادق احمد تلگو مقرر نے رمضان ‘ روزہ اور قرآن کے متعلق واقف کروایا ۔ نماز کی عملی مشق بھی عوام کے سامنے پیش کی ۔ اور ایک یوگا گرو کے اس دعویٰ کو بھی بتایا کہ جو مسلمان پنجوقتہ نماز پڑھتا ہے وہ ہمیشہ صحتمند رہتاہے ۔ جانسن عیسائی راہب نے تمام لوگوں کو اتحاد و اتفاق کے ساتھ مل جل کر رہنے کی تلقین کی ۔ناگوراؤ ناماجی ‘ بی جے پی ریاستی قائد نے اپنی تقریر میں مسلمانوں کو کہا کہ وہ پانچ وقت نماز پڑھیں اور صحتمند عادتوں کو اپنائیں ۔ اپنے بچوں کو اچھے آداب سکھائیں ۔ نارائن پیٹ شہر اتحاد و اتفاق کا گہوارہ رہا ہے اور ہمیشہ رہے گا ۔ چند غنڈہ عناصر کی کارستانیوں کو بنیاد بنا کر سب کو ملزم بنانا درست نہیں ہے ۔ انسان اس دنیا میں مسافر کی طرح ہے ۔ اس کے ساتھ اچھے اور برے اعمال ہی مرنے کے بعد اس کے ساتھ جاتے ہیں۔ نندوناماجی وائس چیرمین بلدیہ نارائن پیٹ نے کہا کہ اتحاد وا تفاق کے لئے کسی اور کا انتظار کرنے کے بجائے ہر شخص اپنے گھر سے اس کی پہل کرے ۔ ڈاکٹر عبدالمجید پروفیسر دکن انجنیئرنگ کالج حیدرآباد اور ڈاکٹر منوہر گوڑ موظف اسسٹنٹ پروفیسر نے بھی خطاب کیا ۔ ڈاکٹر منوہر گوڑ نے نارائن پیٹ کو ضلع بنانے کی تحریک میں ہندو مسلم ‘ عیسائیوں کی شرکت کو مثالی قرار دیا ۔ صراف کرشنا حلقہ اسمبلی کانگریس انچارج نے بھی مخاطب کیا ۔ اس اجلاس میں جناب سید شاہ ـغیاث الدین قادری سجادہ نشین درگاہ تقی باباؒ ‘ محمد خواجہ ناظم ضلع جماعت اسلامی ‘ بنڈی وینوگوپال ‘ عبدالرحمن ‘ امیرالدین ایڈوکیٹ‘ غلام محی الدین چاند ‘ صدر ابتدائی مجلس ‘ عبدالقدیر سندکے ‘ منصورعلی ‘ کاظم حسین نے شرکت کی ۔ افتتاحی کلمات جناب مجاہد صدیقی نے ادا کئے ۔ نظامت کے فرائض جناب احمد خان امیر جماعت نے نبھائے ۔ جماعت اسلامی اور ایس آئی او کے قائدین ارشد فیصل ‘ محمد آصف ‘ ظہیر صوفی ‘ محمد نصیر ‘ حسن الدین پٹیل نے اجلاس میں شرکت کی ۔

 

TOPPOPULARRECENT