Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / فرقہ پرست جماعتوں کو حیدرآباد میں سبق سکھانے کا عزم

فرقہ پرست جماعتوں کو حیدرآباد میں سبق سکھانے کا عزم

جی ایچ ایم سی انتخابات میں کانگریس کی کامیابی کا ادعا، ملو بٹی وکرامارک کا بیان
حیدرآباد /10 دسمبر (سیاست نیوز) گریٹر حیدرآباد بلدی انتخابات میں کانگریس بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کرے گی اور شہر حیدرآباد میں فرقہ پرست جماعتوں کو سبق سکھایا جائے گا۔ لنگم پلی میں منعقدہ پارٹی کے جائزہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ورکنگ پریسیڈنٹ تلنگانہ پردیش کانگریس ملو بٹی وکرامارک نے ان خیالات کا اظہار کیا۔ اس موقع پر حلقہ اسمبلی لنگم پلی کے سابق رکن اسمبلی بھکشا پتی یادو، صدر تلنگانہ پردیش کانگریس اقلیتی سیل محمد خواجہ فخر الدین، نائب صدر تلنگانہ یوتھ کانگریس انیل کمار یادو، صدر کانگریس ضلع رنگا ریڈی ملیش، ترجمان تلنگانہ پردیش کانگریس اقلیتی سیل سید فاروق پاشاہ قادری کے علاوہ کانگریس قائدین اعظم علی، ساجد اور دیگر بھی موجود تھے۔ مسٹر وکرامارک نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت اقتدار کا بیجا استعمال، غیر قانونی اور غیر دستوری اقدامات کرتے ہوئے عہدے اور دولت کا لالچ دے کر تبدیلیٔ سیاسی وفاداری کی حوصلہ افزائی کر رہی ہے۔ انھوں نے کہا کہ کانگریس نے علحدہ تلنگانہ ریاست تشکیل دی اور اب اپوزیشن کا تعمیری رول ادا کرتے ہوئے عوامی مسائل حل کرانے کے لئے انتھک جدوجہد کر رہی ہے۔ انھوں نے کہا کہ کانگریس دور حکومت میں گریٹر حیدرآباد کی ترقی کے لئے بڑے پیمانے پر اقدامات کئے گئے، جس کی وجہ سے عوام دوبارہ کانگریس پر اپنے مکمل اعتماد کا اظہار کریں گے۔ اس موقع پر محمد خواجہ فخر الدین نے کہا کہ ملک میں کانگریس ہی واحد سیکولر جماعت ہے، جو فرقہ پرستی کا ڈٹ کر مقابلہ کر رہی ہے، جب کہ صدر کانگریس سونیا گاندھی اور نائب صدر راہول گاندھی فرقہ پرستی کے سامنے آہنی دیوار بن کر کھڑے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ کانگریس کے دس سالہ دور حکومت (2004ء تا 2014ء) گریٹر حیدرآباد کی ترقی کے لئے ایک لاکھ کروڑ روپئے خرچ کئے گئے، اب یہی کام کانگریس کی کامیابی میں معاون ثابت ہوں گے۔ بھکشا پتی یادو نے کہا کہ کانگریس دور حکومت میں ترقی ہوئی ہے، فلاحی اسکیمیں متعارف کروائی گئیں، جب کہ ٹی آر ایس کا 18 ماہی دور حکومت مایوس کن ہے۔  انھوں نے کہا کہ کانگریس کی متعارف کردہ فلاحی اسکیمات کو ٹی آر ایس حکومت اپنا کارنامہ بتاکر عوام کو گمراہ کر رہی ہے۔ انھوں نے بتایا کہ کانگریس دور حکومت میں انٹرنیشنل ایرپورٹ، آؤٹر رنگ روڈ ایکسپریس وے اور سڑکوں کی تعمیر، ڈرینج سسٹم کو باقاعدہ بنانے کے علاوہ دریائے کرشنا اور گوداوری سے شہر حیدرآباد کو پینے کا پانی لانے وغیرہ جیسے تمام اہم کام کانگریس دور حکومت میں انجام دیئے گئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT