Tuesday , September 26 2017
Home / کھیل کی خبریں / فرینچ اوپن فائنل میں آج جوکووچ اور مرے کے درمیان سخت مقابلہ

فرینچ اوپن فائنل میں آج جوکووچ اور مرے کے درمیان سخت مقابلہ

دونوں ٹینس اسٹارس کی توجہ فرینچ اوپن میں پہلی فتح پر مرکوز
پیرس۔4 جون  (سیاست ڈاٹ کام) فرینچ اوپن فائنل میں کل اتوار کو یہاں نوواک جوکووچ اور اینڈے مرے کے درمیان سخت مقابلہ متوقع ہے۔ عالمی نمبر ایک جوکووچ جو 11 بڑے خطابی مقابلے جیت چکے ہیں، فرینچ اوپن فائنل میں کامیابی کے ذریعہ گرینڈ سلام کیریئر کی مکمل کرنے والے آٹھویں ٹینس اسٹار بننے پر توجہ مرکوز کئے ہوئے ہیں۔ جوکووچ اگر کل فائنل جیت لیتے ہیں تو یہ دراصل ’’جوکووچ سلام‘‘ فائنل ہوگا کیونکہ سربیا کے 29 سالہ ٹینس کھلاڑی ومبلڈن، یو ایس اور آسٹریلین اوپینس پہلے ہی جیت چکے ہیں، لیکن یہ بھی اتفاق ہے کہ پیرس میں قبل ازیں وہ تین مرتبہ فائنلس میں پہونچے جہاں تینوں وقت انہیں ناکامی ہوئی تھی، جہاں تک ان کے حریف مرے کا تعلق ہے، وہ ماضی میں تین مرتبہ فرینچ اوپن سیمی فائنلس تک رسائی حاصل کرچکے تھے جس میں تینوں مرتبہ انہیں شکست ہوئی تھی۔ فرینچ اوپن میں کامیابی حاصل کرنے والے آخری برطانوی فرڈ پیری ہیں جنہوں نے 1935ء میں ٹائٹل جیتا تھا، ان کے بعد بن آسٹن، فرینچ فائنل میں رسائی حاصل کرنے والی آخری برطانوی تھے جنہیں 1937 میں سیمی فائنل میں کامیابی حاصل ہوئی تھی۔ ان کے بعد اینڈی مرے ہی پہلے برطانوی ہیں جنہیں فرینچ اوپن فائنل میں رسائی حاصل ہوئی ہے۔ مرے نے کہا کہ ’’ظاہر، ہم دونوں کے لئے یقینا یہ اہم مقابلہ ہے نوواک کیریئر کی کوشش کررہے ہیں اور میں اپنا پہلا فرینچ اوپن جیتنا چاہتا ہوں‘‘۔ انہوں نے یاد دلایا کہ روجر فیڈرر کو بھی اپنا پہلا اور اب تک کا واحد فرینچ اوپن جیتنے کیلئے 11 مرتبہ پیرس کا سفر کرنا پڑا تھا۔ مرے نے مزید کہا کہ ’’ہم میں سے کوئی نہیں جانتا کہ یہاں کامیابی کے لئے ہمیں مزید کتنے موقع ملیں گے ۔ روجر کو یہاں کامیابی حاصل کرنے کیلئے ایک طویل وقت سے گذرنا پڑا ہے‘‘۔ جوکووچ کو 9 مرتبہ کے فاتح رافیل ندال کے ہاتھوں 2012ء اور 2014ء میں دو مرتبہ شکست ہوئی تھی اور گزشتہ سال اسٹان واورنکا نے اپنی کامیابی کے ذریعہ انہیں چونکا دیا تھا۔ نوواک جوکووچ اپنے کیریئر کے 20 ویں گرینڈ سلام اور مرے کے خلاف ساتویں مرتبہ سامنا کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT