Thursday , August 24 2017
Home / اضلاع کی خبریں / فلمی انداز میں نوجوان کا بہیمانہ قتل

فلمی انداز میں نوجوان کا بہیمانہ قتل

جگتیال کے قریب دلخراش واقعہ، حملہ آور فرار

جگتیال۔/28اکٹوبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) جگتیال سے قریب واقع چلگل بس اسٹاپ قومی شاہراہ نظام آباد پر کار میں سوار نوجوان کا تعاقب کرتے ہوئے کلہاڑیوں سے فلمی انداز میں بہیمانہ قتل کرنے کا واقعہ پیش آیا۔ مقامی عوام خوف و دہشت میں مبتلا ہوگئے۔ تفصیلات کے بموجب جگتیال نیو بس اسٹانڈ کے آؤٹ گیٹ کے روبرو آٹو کنسلٹنٹ گاڑیوں کے کاروبار کرنے والے گوندپلی سے تعلق رکھنے والا منوروکاپو طبقہ کے جی وینکٹیش کا اکلوتا بیٹا جی راکیش 25سال جو کار میں اپنے ساتھی محمد جانی کے ہمراہ کورٹلہ جاکر جگتیال واپس ہورہا تھا کہ پیچھے سے کار کا تعاقب کرتے ہوئے دوسری کار میں سوار حملہ آوروں نے کار کو سامنے لاکر روک دیا اور کار کے گلاس پر حملہ کیا۔ ڈور کھول کر راکیش اُتر رہا تھا کہ کلہاڑی سے حملہ کردیا جس کے نتیجہ میں وہ برسر موقع ہلاک ہوگیا جبکہ محمد جانی اپنی جان بچاکر فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا۔ حملہ کے بعد حملہ آوروں نے کار میں سوار ہوکر راہ فرار اختیار کی۔ قتل کی خبر جنگل کی آگ کی طرح پھیل گئی۔ عوام کا اژدھام جمع ہوگیا۔ اطلاع ملتے ہی پولیس رورل سرکل انسپکٹر وجے راج اور سب انسپکٹر ناگیشور راؤ پولیس جمعیت کے ساتھ مقام واردات پر پہنچ گئے۔ مقام واردات پر دلخراش منظر دیکھ کر راکیش کے والدین اور رشتہ دار آہ و بکا کرنے لگے اور الزام لگایا کہ اراضی کے تنازعہ میں ان کے لڑکے کا سرینو نامی نوجوان نے جو جگتیال میں ہوٹل کا مالک ہے نے ان کے بیٹے کا قتل کیا ہے جس نے گزشتہ سال اسی طرح حملہ کرتے ہوئے اس کے بڑے بھائی کے لڑکے کا قتل کیا تھا اس کے باوجود پولیس خاموش تماشائی بنی ہوئی تھی اور اس کے خلاف کسی قسم کی کارروائی نہ کرنے کا پولیس پر الزام لگایا۔ راکیش کی والدہ اور والد نے ان کے لڑکے کے قتل کا مقدمہ درج نہ کرنے کا مطالبہ کیا اور نعش کو نہ اٹھانے پولیس سے مطالبہ کیا۔ پولیس قتل کا مقدمہ درج کرتے ہوئے واقعہ کی تحقیقات میں مصروف ہے۔

TOPPOPULARRECENT