Sunday , August 20 2017
Home / ہندوستان / فوجی افسر کا اغوا و قتل بزدلانہ حرکت ہے‘فوج کا ردعمل

فوجی افسر کا اغوا و قتل بزدلانہ حرکت ہے‘فوج کا ردعمل

سری نگر ، 10مئی (سیاست ڈاٹ کام) جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیان میں نامعلوم مسلح افراد نے ایک فوجی افسر کو اغوا کرکے قتل کردیا ہے ۔ مقتول فوجی افسر کی لاش آج صبح ضلع شوپیان کے حرمین چوک میں پائی گئی۔ سرکاری ذرائع نے یو این آئی کو بتایا کہ نامعلوم مسلح افراد جو غالباً جنگجو تھے ، حرمین شوپیان کے بٹہ پورہ سے گذشتہ رات فوجی لیفٹیننٹ عمر فیاض کو اغوا کرکے لے گئے ۔ ضلع کولگام کے یاری پورہ کا رہنے والا عمر فیاض بٹہ پورہ میں ایک شادی کی تقریب میں شرکت کے لئے گیا ہوا تھا۔ تاہم حرمین چوک میں آج صبح اُس وقت خوف و ہراس پھیل گیا جب کچھ مقامی لوگوں نے گولیوں سے چھلنی ایک لاش دیکھی۔ اطلاع ملنے کے فوراً بعد ریاستی پولیس نے موقع پر پہنچ کر لاش کو شناخت کے لئے اپنی تحویل میں لیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ مہلوک کی شناخت عمر فیاض کے طورپر ہوئی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ عمر نے حال ہی میں فوج میں شمولیت اختیار کرلی تھی اور چھٹی پر گھر آیا ہوا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ مقتول فوجی جموں خطہ کے اکھنور میں تعینات تھا۔ سیکورٹی ذرائع نے بتایا کہ پولیس نے معاملہ درج کرکے تحقیقات شروع کی ہے ۔دریں اثنا وزارت دفاع کے ترجمان کرنل راجیش کالیا نے فوجی افسر کے قتل کو بزدلانہ حرکت قرار دیا ہے ۔انہوں نے یو این آئی کو بتایا کہ نامعلوم جنگجوؤں نے غیرمسلح فوجی افسر کو اغوا کرکے قتل کردیا۔ انہوں نے بتایا کہ فوج سوگوار خاندان سے تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے یہ عزم کرتی ہے کہ اس گھناونی حرکت کے مرتکبین کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT