Friday , June 23 2017
Home / عرب دنیا / فوجی اڈے پر حملے کے بعد افغانستان کے وزیرِ دفاع اور فوجی سربراہ مستعفی

فوجی اڈے پر حملے کے بعد افغانستان کے وزیرِ دفاع اور فوجی سربراہ مستعفی

کابل ۔ 24 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) افغانستان کے وزیرِ دفاع اور ملک کی برّی فوج کے سربراہ نے طالبان کے حملے میں درجنوں فوجیوں کی ہلاکت کے واقعے کے بعد استعفیٰ دے دیا ہے۔100 سے زیادہ افغان فوجیوں کی ہلاکت کا واقعہ جمعے کو مزارِ شریف میں فوجی اڈے پر حملے کے نتیجے میں پیش آیا تھا۔چیف ایگزیکٹو عبداللہ عبداللہ کے دفتر کے ذرائع کا کہنا ہے کہ صدر اشرف غنی نے طارق شاہ بہرامی کو وزراتِ دفاع کا نگران وزیرِ جبکہ شریف یفتلی کو نیا فوجی سربراہ تعینات کیا ہے۔یاد رہے کہ مزار شریف کے فوجی اڈے پر طالبان کے حملے میں ہلاکتوں کی حتمی تعداد اب بھی واضح نہیں تاہم بعض عینی شاہدین نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ انھوں نے 165 لاشیں گنی ہیں۔یہ  2011 میں طالبان جو اقتدار سے الگ کیے جانے کے بعد سے ان کی جانب سے کیا جانے والا سب سے بڑا حملہ تھا۔

Leave a Reply

TOPPOPULARRECENT