Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / فٹ پاتھ کے تجارتی اغراض کیلئے استعمال کے خلاف کارروائی

فٹ پاتھ کے تجارتی اغراض کیلئے استعمال کے خلاف کارروائی

دوکان کے باہر سامان رکھ کر فروخت کرنے والے 27 تاجرین کو جیل بھیج دیا گیا
حیدرآباد۔21فروری(سیاست نیوز) دکان کے باہر فٹ پاتھ پر سامان رکھ کر فروخت کرنے والوں اور اپنی جائیداد کے علاوہ فٹ پاتھ یا سڑک کا حصہ بغرض تجارت استعمال کرنے والے 27تاجرین کو جیل بھیج دیا گیا۔ پرانے شہر کے علاقوں میں کی گئی اس کاروائی کے سلسلہ میں مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد اور محکمہ ٹریفک پولیس کی جانب سے 28تاجرین کے خلاف چارج شیٹ داخل کی گئی تھی جن میں 27تاجرین کو جیل بھیج دیا گیا۔ تفصیلات کے بموجب 3دکانداروں کو 3 یوم کی سزائے قید اور 3000روپئے جرمانہ عائد کیا گیا ہے اور 24دکانداروں کو 2یوم کی سزائے قید و 3000ہزار روپئے جرمانہ عائد کیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ ایک دکاندار کو معزز جج نے صرف 2500روپئے جرمانہ ادا کرنے کی ہدایت دیتے ہوئے چھوڑ دیا۔ مسٹر رنگا ناتھ ڈپٹی کمشنر آف پولیس ٹریفک کے مطابق ان دکانداروں کو متعدد مرتبہ سمجھانے اور فٹ پاتھ کے استعمال کو بند کرنے کی تاکید کرنے اور جرمانہ عائد کرنے کے بعد یہ کاروائی کی گئی ہے۔ انہوں نے مزید بتایا کہ شہر کے مختلف مقامات پر محکمہ ٹریفک پولیس اور مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد کے تعاون و اشتراک سے کی جانے والی اس کاروائی کے دوران ان دکانداروں کے خلاف جی ایچ ایم سی ایکٹ 402اور 521کے تحت مقدمات درج کرتے ہوئے انہیں عدالت میں پیش کیا جا رہا ہے اور قانون کے مطابق کی جانے والی اس کاروائی کی عوام کی جانب سے سراہنا بھی کی جا رہی ہے۔ بتایاجاتا ہے کہ محکمہ ٹریفک پولیس نے جن تاجرین کو عدالت میں پیش کرتے ہوئے سزاء دلوائی ہے ان تاجرین کے خلاف مجلس بلدیہ عظیم تر حیدرآباد اور ٹریفک پولیس کی جانب سے ویڈیو اور فوٹوز کے شواہد پیش کئے گئے ہیں تاکہ دکانداروں کے خلاف مقدمہ کو مستحکم بنایاجاسکے۔ ٹریفک پولیس نے فٹ پر موجود قبضہ جات کی برخواستگی کیلئے شروع کردہ اس مہم کے متعلق بتایا کہ گذشتہ ایک ماہ سے یہ مہم جاری ہے اور اس مہم کے دوران کئی دکانداروں کو متنبہ کرتے ہوئے ان کی کونسلنگ بھی کی جا چکی ہے لیکن اس کے باوجود وہی روش اختیار کرنے والو ںکے خلاف کاروائی کا جی ایچ ایم سی کی جانب سے ادعا کیا جارہا ہے۔ دکانداروں کا کہنا ہے کہ کونسلنگ سے قبل لی گئی تصاویر کی بنیاد پر انہںے مجرم ثابت کیا جا رہا ہے۔ جی ایچ ایم سی عہدیداروں کے مطابق سزاء پانے اور جرمانہ ادا کرنے والوں کی جانب سے دوبارہ خلاف ورزی کی صورت میںتجارتی لائسنس کی تنسیخ کا بلدیہ کو اختیار حاصل ہے۔

TOPPOPULARRECENT