Sunday , September 24 2017
Home / شہر کی خبریں / فیس باز ادائیگی بقایاجات کی 31 مارچ تک اجرائی کا اعلان

فیس باز ادائیگی بقایاجات کی 31 مارچ تک اجرائی کا اعلان

اوورسیز اسکالرشپس کی ادائیگی تاریخی اقدام، بے قاعدگیوں میں ملوث اِداروں کو ہرگز معاف نہیں کیا جائے گا : چیف منسٹر
حیدرآباد۔ 5 جنوری (سیاست نیوز) چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر نے 31 مارچ تک سال برائے 2015-16ء کے فیس باز ادائیگی کے بقایاجات جاری کردینے کا اعلان کرتے ہوئے بہت جلد کل جماعتی اجلاس طلب کرتے ہوئے مسئلہ کا مستقل حل برآمد کرنے کا وعدہ کیا اور سرٹیفکیٹس کی اجرائی کیلئے احکامات جاری کرنے کا تیقن دیا۔ اوورسیز اسکالرشپس کی ادائیگی کو تاریخی اقدام قرار دیتے ہوئے طلبہ کو سیاسی جماعتوں کے بچھائے ہوئے جال میں پھنس کر اپنی زندگیوں کو تباہ نہ کرنے کا مشورہ دیا۔ بے قاعدگیوں میں ملوث ہونے والے کالجس کو بند کرتے ہوئے نئے کالجس قائم کرنے کا اعلان کیا۔ چیف منسٹر کے جواب پر عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کانگریس،تلگو دیشم اور سی پی ایم نے واک آؤٹ کیا۔ آج جیسے ہی اسمبلی اجلاس کا آغاز ہوا، تمام اپوزیشن جماعتوں نے فیس باز ادائیگی پر اپوزیشن کو وضاحت کا موقع فراہم نہ کرنے پر احتجاج کیا جس پر چیف منسٹر نے وقفہ سوالات کے بعد وضاحت کا موقع فراہم کرنے سے اتفاق کیا۔ دوبارہ بحث کے آغاز پر چیف منسٹر نے فیس باز ادائیگی کو ’’کانگریس حکومت کی اسکیم‘‘ قرار دیا جس کو ٹی آر ایس حکومت نے نہ صرف برقرار رکھا ہے بلکہ کانگریس دور حکومت میں جو قاعدہ قانون بنائے گئے تھے، اس پر جوں کا توں عمل کیا جارہا ہے۔ کوئی تبدیلی نہیں کی گئی ۔ فیس بقایاجات کی اجرائی میں تاخیر کوئی نئی بات نہیں ہے۔ کانگریس دور حکومت کے بقایاجات کی چیف منسٹر نے فہرست پیش کی۔ انہوں نے کہا کہ سابق بقایاجات جاریہ سال کے اختتام تک جاری کئے جاتے ہیں۔ کانگریس کے علاوہ دوسری اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے واویلا مچاتے ہوئے  ٹی آر ایس حکومت کے خلاف جھوٹے اور بے بنیاد الزامات عائد کئے جارہے ہیں۔ ٹی آر ایس حکومت کو سماج کے تمام طبقات سے یکساں ہمدردی ہے۔ عوام ہماری نیت سے اچھی طرح واقف ہیں۔ ریاست کی تاریخ میں پہلی مرتبہ 20 لاکھ اوورسیز اسکالرشپس دی جارہی ہے۔ بے قاعدگیوں میں ملوث ہونے والے تعلیمی اداروں کو ہرگز معاف نہیں کیا جائے گا، ایسے کالجس کو بند کرتے ہوئے ان کی جگہ نئے کالجس قائم کئے جائیں گے۔ اس لئے خانگی یونیورسٹیز کے قیام کیلئے قانون سازی کی جارہی ہے۔ 31 مارچ تک سال 2015-16ء کے تمام فیس باز ادائیگی کے بقایاجات جاری کردیئے جائیں گے اور بہت جلد کل جماعتی اجلاس طلب کرتے ہوئے وہ مسئلہ کا مستقل حل نکالنے کیلئے تجاویز طلب کریں گے۔ مسائل کو حل کرنے کیلئے اصلاحات کے عمل کا آغاز کیا جائے گا۔ چیف منسٹر نے طلبہ سے اپیل کی کہ وہ سیاسی جماعتوں کے بہکاؤ ے میں آکر اپنا مستقبل خراب نہ کریں۔ انہوں نے کہا کہ وہ نوٹ بندی کی تائید کرچکے ہیں اور آج بھی اپنے موقف پر برقرار ہیں۔ یقیناً مستقبل میں اس کے مثبت نتائج برآمد ہوں گے۔ اقلیتی طلبہ کو ایس سی، ایس ٹی طلبہ کے مماثل تمام مراعات فراہم کئے جائیں گے۔ مسلمانوں کی معاشی حالت کمزور ہے جس سے وہ واقف ہیں۔ تعلیمی پسماندگی ٹی آر ایس کو وراثت میں ملی ہے۔ قائد اپوزیشن کے جانا ریڈی نے کہا کہ تعلیم پر سرمایہ کاری ملک کا مستقبل ہے تاہم چیف منسٹر کے سی آر اس کو بوجھ تصور کررہے ہیں اور علیحدہ تلنگانہ ریاست میں فیس باز ادائیگی کے 1800 کروڑ روپئے کا قرض وراثت میں ملنے کا ریمارکس کررہے ہیں جبکہ علیحدہ تلنگانہ ریاست کو 5,000 کروڑ روپئے فاضل بجٹ بھی حاصل ہوا ہے۔ اس پر کوئی توجہ نہیں کررہے ہیں۔ چیف منسٹر نے کانگریس حکومت کے بقایاجات کا حوالہ دیا ہے تاہم ٹی آر ایس حکومت کے دو سالہ بقایاجات  1500 کروڑ روپئے کی اجرائی میں کوئی دلچسپی نہیں دکھائی گئی۔ مجلس کے قائد مقننہ اکبرالدین اویسی نے فیس باز ادائیگی کی تمام تفصیلات پیش کی اور سماج کے تمام طبقات کے طلبہ سے متعلق بقایاجات پر روشنی ڈالی۔ حکومت کی ویب سائیٹ پر دی جانے والی تفصیلات پر حکومت سے وضاحت طلب کی۔ ویب سائیٹ پر غلط اطلاعات فراہم کرنے کا الزام عائد کیا۔ ایس سی، ایس ٹی طبقات کے طرز پر اقلیتی طلبہ کو بھی مراعات فراہم کرنے کیلئے حکومت سنجیدہ ہے، مگر عہدیدار چیف منسٹر کو گمراہ کررہے ہیں۔ انفراسٹرکچر کی کمی کا بہانہ کرتے ہوئے خانگی کالجس کو بند کئے جارہے ہیں۔ انہوں نے 500 جونیر کالجس بند کردینے کی حکومت سے وجہ طلب کی۔ انہوں نے اوورسیز بقایاجات جاری کرنے کا الزام عائد کیا۔ بی جے پی کے رکن اسمبلی ڈاکٹر لکشمن، تلگو دیشم کے رکن اسمبلی کرشنیا اور سی پی ایم کے رکن اسمبلی سونم راجیا نے بھی فیس باز ادائیگی کے بقایاجات فوری جاری کردینے کا حکومت سے مطالبہ کیا۔ چیف منسٹر کے جواب پر عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کانگریس، تلگو دیشم اور سی پی ایم نے واک آؤٹ کیا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT