Thursday , September 21 2017
Home / شہر کی خبریں / فیس ری ایمبرسمنٹ اسکیمکیلئے مختص رقم میں اضافہ کا مطالبہ

فیس ری ایمبرسمنٹ اسکیمکیلئے مختص رقم میں اضافہ کا مطالبہ

حیدرآباد۔/22مارچ، ( این ایس ایس ) فیس ری ایمبرسمنٹ اسکیم کو اہل غریب اور پسماندہ طبقات سے تعلق رکھنے والے طلبہ کے حق میں ٹی آر ایس حکومت کی بہترین بہبودی اسکیم قرار دیتے ہوئے بجٹ میں اضافہ کی خواہش کی گئی ہے۔ کنوینر جوائنٹ ایکشن کمیٹی پرائیویٹ انجینئرنگ کالجس، ٹیچرس اسوسی ایشن آف تلنگانہ ڈاکٹر این شیوا شنکر ریڈی نے کہا کہ سال 2015-16 اور 2016-17 کے فیس ری ایمبرسمنٹ بقایا جات اب تک جاری نہیں کئے گئے۔ انہوں نے کہاکہ اس تاخیر کی وجہ سے کئی انجینئرنگ کالجس کا انتظامیہ اسٹاف کو تنخواہ دینے سے قاصر ہے۔ یہی نہیں بلکہ اسٹاف کو بھی روزمرہ کے اخراجات کیلئے قرضوں پر انحصار کرنا پڑرہا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ملازمت کی طمانیت نہ ہونے کے باعث اچھے اساتذہ ایک سے دوسرے کالج منتقل ہورہے ہیں اور اس کی وجہ سے معیار تعلیم پر اثر پڑرہا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ فیس ری ایمبرسمنٹ بقایا جات بڑھ کر3,300 کروڑ روپئے ہوگئے ہیں اور حکومت نے مالی سال 2017-18کیلئے بجٹ میں صرف 1935 کروڑ روپئے کی تجویز رکھی ہے۔ انہوں نے چیف منسٹر، وزیر فینانس اور وزیر تعلیم سے مختص رقم میں اضافہ کرنے کی خواہش کی تاکہ درکار ضروریات پوری ہوسکیں۔انہوں نے کہا کہ فیس ری ایمبرسمنٹ سے غریب اور پسماندہ طبقات سے تعلق رکھنے والے طلباء کو فائدہ ہوگا ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT