Saturday , September 23 2017
Home / کھیل کی خبریں / فیصلہ کن ٹسٹ میں ہندوستان کیلئے حالات مشکل ہوں گے

فیصلہ کن ٹسٹ میں ہندوستان کیلئے حالات مشکل ہوں گے

دھرمشالہ کی وکٹ آسٹریلیا کیلئے موزوں : جانسن

نئی دہلی ۔22 مارچ۔(سیاست ڈاٹ کام) آسٹریلیا کے سابق فاسٹ بولر مچل جانسن مانتے ہیں کہ دھرمشالہ میں کھیلے جانے والے ہند۔ آسٹریلیا چوتھے اور فیصلہ کن ٹسٹ میں ہندوستانی ٹیم کیلئے حالات مشکل ہوں گے جبکہ اسٹیو اسمتھ اور ان کے ساتھی کھلاڑی یہاں کی وکٹ پر پراعتماد رہیں گے ۔ جانسن نے فاکس اسپورٹس سے اظہارخیال کرتے ہوئے کہا کہ دھرمشالہ کا میدان شاندار ہے اور یہاں کی وکٹ پر گھاس کی موجودگی سے وکٹ کا جو برتاؤ ہوگا وہ آسٹریلیائی ٹیم کے کھلاڑیوں کیلئے زیادہ موزوں ہوگا جس کی وجہ سے ہندوستانی بیٹسمین مشکل حالات کا سامنا کرسکتے ہیں۔ جانسن نے مزید کہاکہ وہ سمجھتے ہیں کہ ہندوستانی کھلاڑی سیریز کے دوران حد سے زیادہ خوداعتمادی کا شکار تھے جس کی وجہ سے انھیں آسان کامیابی حاصل نہیں ہوپائی ہے ۔ بائیں ہاتھ کے فاسٹ بولر نے یہ بھی کہا ہے کہ پونے ٹسٹ میں آسٹریلیائی ٹیم کیلئے ہیرو ثابت ہونے والے اسٹیو او کیف کو ٹیم میں فاسٹ بولر جاکسن برڈ کیلئے جگہ خالی کرنی پڑسکتی ہے کیونکہ دھرمشالہ کی وکٹ فاسٹ بولروں کیلئے سازگار ہے ۔ ہفتہ کو دھرمشالہ میں شروع ہونے والے چوتھے اور آخری ٹسٹ کیلئے جو وکٹ موجود ہے

وہ فاسٹ بولروں کیلئے سازگار ہے اور اس مناسبت سے آسٹریلیائی ٹیم میں ایک اسپنر کو اپنی جگہ خالی کرنی پڑسکتی ہے۔ جانسن نے مزید کہاکہ سیریز کے دوران اسپنرس نے کافی شاندار مظاہرے کئے ہیں حالانکہ ان پر بہتر مظاہرہ کیلئے کافی دباؤ تھا ، جس کے باوجود اسپنرس نے جہاں چند مایوس کن مظاہرے کئے وہیں ان کے زیادہ تر مظاہرے بہترین رہے اور یہی کرکٹ ہے ۔ نیتھن لائین اور اسٹیو او کیف دونوں نے ہی سیریز میں بہترین مظاہرہ کیا ہے لیکن دھرمشالہ کی وکٹ کی مناسبت سے قطعی گیارہ کھلاڑیوں میں دو اسپنرس کی گنجائش نہیں ہے اور میں سمجھتا ہوں کہ دھرمشالہ کی وکٹ پر جیکسن برڈ کی ٹیم میں شمولیت ناگزیر ہے ۔ دھرمشالہ کی وکٹ آسٹریلیائی وکٹوں کی طرح ہی ہے لہذا نیتھن لائین واحد اسپنر ہوسکتے ہیں اور ان کے بعد برڈ تیسرے فاسٹ بولر کی ذمہ داریاں نبھائیں گے ۔ آسٹریلیائی ٹیم کی 73 ٹسٹ میں نمائندگی کرنے والے جانسن نے گزشتہ مقابلے میں شان مار ش اور پیٹر ہنڈس کامب کی بیٹنگ کی ستائش کی اور کہا کہ جس طرح ان بیٹسمینوں نے ٹیم کو امکانی شکست سے محفوظ رکھا اُس سے مہمان ٹیم کو چوتھے ٹسٹ میں میزبان ٹیم پر نفسیاتی برتری حاصل ہوگی ۔ جانسن کے بموجب رانچی کے نتیجے نے آسٹریلیائی ٹیم کو کافی بڑا نفسیاتی فائدہ پہونچایا ہے ۔ کیونکہ اب ہندوستان کیلئے صرف دو کھلاڑی اسٹیو اسمتھ اور ڈیوڈ وارنر پر توجہ دینا کافی نہیں ہوگا کیونکہ ٹیم میں موجود دیگر کھلاڑی بھی بہتر مظاہرہ کے ذریعہ اپنی ٹیم کو نہ صرف فائدہ پہنچاسکتے ہیں بلکہ امکانی شکست کو بھی ٹالنے کی صلاحیت رکھتے ہیں ۔ گزشتہ مقابلے میں حالانکہ آسٹریلیائی ٹیم نے مقابلے کو صرف ڈرا کیا ہے لیکن اس نتیجے سے آسٹریلیائی کھلاڑیوں کا حوصلہ کافی بلند ہوا ہے اور وہ آئندہ مقابلے میں کامیابی میں کلیدی رول ادا کرسکتا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT