Wednesday , September 20 2017
Home / شہر کی خبریں / قائد اپوزیشن تلنگانہ کونسل محمد علی شبیر کو دھمکیوں کی مذمت

قائد اپوزیشن تلنگانہ کونسل محمد علی شبیر کو دھمکیوں کی مذمت

اعلیٰ سطحی تحقیقات کا مطالبہ ، کانگریس ایم ایل سی محمد فاروق حسین کا ردعمل
حیدرآباد ۔ 14 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : کانگریس کے رکن قانون ساز کونسل مسٹر محمد فاروق حسین نے قائد اپوزیشن تلنگانہ قانون ساز کونسل مسٹر محمد علی شبیر کو دھمکیاں دینے کی سخت مذمت کرتے ہوئے اس کی اعلیٰ سطحی تحقیقات کرانے کا مطالبہ کیا ۔ مسٹر محمد فاروق حسین نے کہا کہ مسٹر محمد علی شبیر قائد اپوزیشن کے عہدے پر فائز ہیں اور تلنگانہ میں اپوزیشن کا تعمیری رول ادا کررہے ہیں ۔ نہ صرف عوامی مسائل کو پیش کررہے ہیں بلکہ حکومت کی غلطیوں کی نشاندہی کرتے ہوئے عوام کی فلاح و بہبود اور تلنگانہ کی ترقی کے لیے ٹھوس تجاویز دے رہے ہیں ۔ جس کا احترام کرنے کی بجائے ٹی آر ایس کارکنوں کی جانب سے انہیں جان سے مار دینے کی دھمکی دینا بزدلی کی علامت ہے ۔ کانگریس نے برسوں حکومت کی ہے ۔ اپوزیشن جماعتوں کی تجاویز اور مشوروں کا ہمیشہ احترام کیا ہے تاہم ٹی آر ایس حکومت اپوزیشن جماعتوں سے منتخب عوامی نمائندوں کو اپنی پارٹی میں شامل کرتے ہوئے اسمبلی ، کونسل ، ضلع پریشد اور منڈل پریشد اور کارپوریشنس سے اپوزیشن کا صفایا کرنے کے ایجنڈے پر کام کررہی ہے جو جمہوریت پر بدنما داغ ہے کیوں کہ جمہوریت میں اپوزیشن کو اعلیٰ مقام حاصل ہے لیکن حکمران ٹی آر ایس اقتدار کا بیجا استعمال کرتے ہوئے اپوزیشن کو ہر طرح سے کمزور کرنے کی کوشش کررہی ہے جس کی کانگریس پارٹی سخت مذمت کرتی ہے ۔ ڈرا دھمکا کر اور لالچ دے کر ٹی آر ایس اپوزیشن قائدین کو اپنی جماعت میں شامل کررہی ہے اور حق کی لڑائی لڑنے والے مسٹر محمد علی شبیر کو دھمکی دے رہی ہے ۔ ان دھمکیوں سے کانگریس اور محمد علی شبیر ڈرنے گھبرانے والے نہیں ہیں بلکہ مزید تازہ دم ہو کر اسمبلی اور کونسل میں نہ صرف اپوزیشن کا تعمیری رول ادا کریں گے دوسرے پلیٹ فارمس کے ذریعہ حکومت کی کمزوریوں اور ناکامیوں کو منظر عام پر لائیں گے ۔ مسٹر محمد فاروق حسین نے ریاستی وزیر آئی ٹی اور پنچایت راج مسٹر کے ٹی آر کی جانب سے قائد اپوزیشن اسمبلی مسٹر کے جانا ریڈی کو تنقید کا نشانہ بنانے اور ان پر سیاسی وفاداری تبدیل کرتے ہوئے تلگو دیشم سے کانگریس میں شامل ہونے کا ریمارک کرنے پر سخت اعتراض کرتے ہوئے کہا کہ شاید کے ٹی آر بھول رہے ہیں ان کے والد موجودہ چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر پہلے کانگریس میں تھے سیاسی وفاداری تبدیل کر کے تلگو دیشم میں شامل ہوئے ۔ 15 سال قبل تلگو دیشم سے مستعفی ہو کر ٹی آر ایس تشکیل دی ہے ۔ ریاستی وزراء اور ٹی آر ایس قائدین کو مشورہ دیتے ہوئے فاروق حسین نے کہا کہ وہ پہلے اپنے سیاسی کیرئیر کا محاسبہ کریں پھر دوسروں پر ریمارکس کریں ۔۔

TOPPOPULARRECENT