Monday , October 23 2017
Home / جرائم و حادثات / قرض دلانے کے بہانے عوام کو ٹھگنے والی سہ رکنی ٹولی گرفتار

قرض دلانے کے بہانے عوام کو ٹھگنے والی سہ رکنی ٹولی گرفتار

حیدرآباد /7 ستمبر ( سیاست نیوز ) حیدرآباد کی سائبر کرائم پولیس نے تین رکنی دھوکہ بازوں کی ٹولی کو گرفتار کرنے میں کامیابی حاصل کرلی جو قرض دلانے کے بہانے عوام کے کروڑہا روپئے ٹھگ لئے تھے ۔ کمشنر پولیس حیدرآباد مسٹر ایم مہیندر ریڈی نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بتایا کہ اعظم پورہ کے ساکن سید قطب الدین نے سائبر کرائم پولیس سے ایک شکایت درج کروائی جس میں یہ بتایا کہ کم شرح سود پر آسانی سے قرض دلانے کے بہانے والیو فائن ویسٹ فینانس لمیٹیڈ نائیوڈا دہلی نے انہیں دھوکہ دیا ۔ سائبر کرائم پولیس نے اس سلسلے میں ایک مقدمہ درج کرتے ہوئے دھوکہ بازوں کی تلاش شروع کردی ۔ دھوکہ بازوں کے موبائل فونس کی مدد سے سائبر کرائم پولیس نے کامیاب طور پر ان کا پتہ لگالیا اور ہریانہ کے گُرگاؤں میں 34 سالہ مہی پال سنگھ یادو اور اس کے دو ساتھی 21 سالہ ومل ارورہ اور 28 سالہ شانتانو کمار کو گرفتار کرلیا ۔ مسٹر مہیندر ریڈی نے بتایا کہ اس ٹولی کا سرغنہ مہی پال سنگھ ہے جو ٹیلی مارکیٹنگ میں مہارت رکھتا ہے اور اس نے گُرگاؤں میں انویسٹ گوروجی پرائیویٹ لمیٹیڈ کے نام پر ایک کمپنی قائم کی اور اپنے ساتھی راکیش شرما کو اس کا ڈائیرکٹر مقرر کیا ۔ کچھ ہی دنوں میں اس نے اس کمپنی کی مدد سے والیو آڈیڈ کارڈس ( پریویلج کارڈ ) کا کاروبار بھی شروع کیا اور تقریباً 35 تا 40 ٹیلی کالرس کی مدد سے وہ معصوم عوام کو نشانہ بناتے ہوئے ان سے کروڑوں روپئے کی رقم مختلف بینک کھاتوں میں منتقل کرنے پر مجبور کیا ۔ کمشنر پولیس نے یہ بتایا کہ مذکورہ دھوکہ باز گوگل کے ذریعہ موبائل فون نمبرات کا پتہ لگاتے ہوئے عام شہریان کو کم شرح سود پر قرض فراہم کرنے کا جھانسہ دیتے ہوئے ان سے بطور پروسیسنگ فیس لاکھوں روپئے ہڑپ لیا کرتا تھا ۔ انہوں نے بتایا کہ تلنگانہ کے علاوہ آندھراپردیش ، کرناٹک ، مہاراشٹرا  ، مغربی بنگال اور دیگر ریاستوں میں جملہ 522 افراد کو قرض دلانے کے بہانے 10 کروڑ روپئے ہڑپ لئے ۔ مذکورہ دھوکہ بازوں کی ٹولی نے ایچ ڈی ایف سی ، آئی سی آئی سی آئی ، اور دیگر مشہور بینکس میں بینک کھاتوں میں کروڑہا روپئے کی منتقلی کے بعد وہ اچانک غائب ہوجاتے تھے ۔ سائبر کرائم پولیس کے انسپکٹر روی کرن اور ان کے ٹیم کانسٹیبلس عبدالسلیم ، محمد فیروز اور ایم وجئے کمار نے اس کیس میں ملوث دھوکہ بازوں کو گرفتار کرنے میں اہم رول ادا کیا اور کمشنر پولیس نے سائبر کرائم ٹیم کی ستائش کرتے ہوئے کی ۔

TOPPOPULARRECENT