Sunday , September 24 2017
Home / دنیا / قطر کی ناکہ بندی اجتماعی سزا کے مترادف

قطر کی ناکہ بندی اجتماعی سزا کے مترادف

خاندان، طلبہ اور بیمار افراد متاثر، اقوام متحدہ سے تحقیقات کی اپیل
جنیو۔/17جون، ( سیاست ڈاٹ کام ) قطر کی انسانی حقوق کمیٹی کے سربراہ نے ان کے ملک کو الگ تھلگ کرنے مختلف عرب ممالک کی طرف سے کئے گئے اقدامات کی مذمت کی اور ان کارروائیوں کو ایک ایسی ’’ اجتماعی سزا ‘‘ قرار دیا جس سے نہ صرف قطر کے شہریوں بالخصوص طلبہ، خاندانوں اور بیماروں کو ناقابل بیان مصائب سے گذرنا پڑ رہا ہے۔ جبکہ تین خلیجی ممالک نے ان اقدامات کی تائید تو کی ہے لیکن اپنے قطری برادران پر ہونے والے واقعات کو کم کرنے کی وکالت کی ہے۔ ایک ایسے وقت جب خلیجی ممالک کے مابین پیدا شدہ سفارتی تنازعہ شدت اختیار کرگیا ہے قطر کے نمائندہ علی بن سامع المری نے جنیوا میں خطاب کے دوران اقوام متحدہ کے ماہرین پر زور دیا کہ وہ قطر کے خلاف ناکہ بندی سے ہونے والے واقعات کی تحقیقات کریں۔ واضح رہے کہ سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، بحرین، مصر اور چند دوسرے ممالک نے قطر پر دہشت گردوں کی تائید کا الزام عائد کرتے ہوئے اس سے سفارتی تعلقات منقطع کرلئے تھے۔

TOPPOPULARRECENT