Wednesday , August 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / قلت آب دور کرنے جنگی خطوط پر اقدامات کی ہدایت

قلت آب دور کرنے جنگی خطوط پر اقدامات کی ہدایت

نظام آباد:17؍ فروری (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ضلع کلکٹر ڈاکٹر یوگیتا رانا نے منڈل سطح کے عہدیدار ، چینج ایجنٹس ، ڈی آر او کے ساتھ ویڈیو کانفرنس کیااور اس موقع پر بتایا کہ ضلع میں آبی سہولتوں کی فراہمی کیلئے حکومت کی جانب سے 8 کروڑ روپئے منظور کئے گئے ہیں ۔لہذا جس کسی بھی مقام پر پینے کے پانی کی قلت پیدا ہونے کی صورت میں فوری جنگی خطوط پر اقدامات کریں۔ انہوں نے بتایا کہ ضلع میں شدید خشک سالی کے حالات ہے اور پینے کے پانی کی قلت پیدا ہونے کے امکانات ہیں۔ جنگی خطوط پر آبی سہولتوں کی فراہمی کیلئے اقدامات کرنے اورحالات کا ہر وقت جائزہ لیتے ہوئے مسائل پیدا ہونے سے قبل ہی اقدامات کریں۔ اب تک 44لاکھ روپئے ضلع انتظامیہ کے پاس موجود تھے۔ اس کے علاوہ مزید 8 کروڑ روپئے منظور کئے گئے ہیںفنڈس کی کوئی قلت نہیں ہے ۔ضرورت زدہ مقامات پر اقدامات کریں۔ اخراجات کے بلوں کی ادائیگی کی صورت میں مزید فنڈس منظور کئے جائیں گے ۔ گندھاری منڈل سب سے زیادہ پانی کی شدید قلت ہے لہذا منڈل عہدیدار اس پر خصوصی توجہ دیں۔ طمانیت روزگار سے متعلق 200 فیصد کاموں کی نشاندہی کرتے ہوئے منظوری کیلئے رپورٹ پیش کریں تالابوں کی نکاسی کیلئے بڑے پیمانے پر مزدوروں کو کام فراہم کریں اب تک 60 ہزار خاندانوں کو 100 دن کام فراہم کیا گیا مزید 36 ہزار خاندانوں کو 75 دن کام فراہم کئے گئے اس کے علاوہ مزید 100 دن کام فراہم کریںیہ کام مکمل کرنے کی صورت میں 50 دن کام فراہم کریں ۔ مارچ تک ضلع میں 1.50لاکھ خاندانوں کو 100 دن کام فراہم کرنے2.08 لاکھ مزدوروں کو کام فراہم کرتے ہوئے 200 کروڑ روپئے خرچ کئے جائیں گے۔ خشک سالی کی صورتحال سے نمٹنے کیلئے بڑے پیمانے پر مزدوروں کو کام فراہم کرنے چار حلقوں میں صد فیصد بیت الخلائوں کے تعمیر کیلئے 62 ہزار بیت الخلائوں کی تعمیر کا نشانہ مقرر کیا گیا ہے۔ ان میں سے 75ہزار بیت الخلائوں کی تعمیر کیلئے منظوری عمل میں لائی گئی ہے باقی کاموں کو آغاز کرنے کیلئے اقدامات کریں۔ 30 کروڑ کے تخمینہ میں 33لاکھ روپئے خرچ کئے گئے ۔ بلوں کی رپورٹ پیش کرنے کی صورت میں فنڈس خرچ کئے جائیں گے اور ڈاٹا انٹری اور می سیوا، پنچایتوں کی سہولتوں کا استعمال کریں ۔ اکنامکس اسپورٹس کے تحت ایس سی کارپوریشن کو 398 ، ایس ٹی کارپوریشن کو 40، بی سی کارپوریشن کو 122 درخواستوں کی جانچ پڑتال کرتے ہوئے ایم پی ڈی اوز رپورٹ پیش کرنے کی صورت میں اس کی عمل آوری کی جائے گی۔ ضلع جوائنٹ کلکٹر رویندرریڈی آبی سہولتوں کی فراہمی میں گرام پنچایت سکریٹریوں کی کارکردگی اہمیت کی حامل ہے۔ 24 گھنٹے اس میں مصروف رہنے کی خواہش کی۔ اس ویڈیو کانفرنس میں اڈیشنل جوائنٹ کلکٹر راجہ رام ، پی ڈی وینکٹیشورلو بھی موجود تھے۔ ضلع کلکٹر ڈاکٹر یوگیتا رانا نے پرگتی بھون میں عہدیداروں سے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ سن سند آدرش گرامینا یوجنا کے تحت زیر التواء کاموں کی تکمیل کرنے کی ہدایت دی اور ترک تعلیم کرنے والے اور بچہ مزدور کے خاتمہ کیلئے اقدامات کرنے، سلف ایمپلائمنٹ کے تحت کنداکرتی میں 30 افراد کو سیونگ مشین کی تربیت دی جارہی ہے کولاس میں 41افراد کو تربیت دئیے جانے و دیگر اقدامات کے بارے میں تفصیلی طور پر واقف کروایا۔

TOPPOPULARRECENT