Wednesday , August 23 2017
Home / کھیل کی خبریں / لارڈز میں پاکستان کا محتاط آغاز، ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ

لارڈز میں پاکستان کا محتاط آغاز، ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ

اوپنرز حفیظ و مسعود کے درمیان 38 رنز کی شراکت کے بعد دوسرے سیشن تک چار وکٹس کھوئے
لندن ، 14 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان نے انگلینڈ کے خلاف پہلے ٹسٹ کے آج پہلے دن محتاط انداز اختیار کیا۔ ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کرتے ہوئے لنچ تک 76/2 اسکور کئے مگر درمیانی سیشن میں اظہر علی (7رنز) اور یونس خان (33) کی دو اہم وکٹیں کھو دیئے۔ تادم تحریر کپتان مصباح الحق اور چھٹے نمبر کے اسد شفیق پاکستانی اننگز کو استحکام کی طرف سے لیجانے کی کوشش کررہے تھے۔ پاکستانی اسکور 158/4 میں مصباح 48 اور شفیق 12 پر کھیل رہے تھے۔ قبل ازیں لارڈز کرکٹ گراؤنڈ میں مہمان کپتان مصباح نے بیٹنگ کیلئے سازگار وکٹ پر ٹاس جیت کر پہلے بلے بازوں کو آزمانے کا فیصلہ کیا ۔ انھوںنے کہا کہ وکٹ بیٹنگ کیلئے سازگار نظر آ رہی ہے، اسی لئے ہم ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کر رہے ہیں۔ لارڈز کی وکٹ گزشتہ کچھ عرصے سے بیٹنگ کیلئے سازگار تصور کی جاتی ہے اور یہی وجہ ہے کہ اس وکٹ پر بھی بڑی تعداد میں رنز بننے کا امکان ہے۔ اوپنرز محمد حفیظ اور شان مسعود نے محتاط انداز میں اننگز کا آغاز کیا اور ابتدائی دس اوورز میں کوئی وکٹ نہ گرنے دی لیکن اس دوران شان مسلسل جدوجہد کرتے نظر آئے۔

بالآخر 38 کے مجموعی اسکور پر مسعود کی ہمت جواب دے گئی اور 7 رنز بنانے کے بعد پویلین لوٹے۔ حفیظ اچھی فام میں نظر آئے لیکن ایک غیر ضروری شاٹ کھیلنے کی کوشش میں 40 رنز بنانے کے بعد وکٹ گنوا بیٹھے۔ اس کے بعد اظہر اور یونس وکٹ پر یکجا ہوئے اور کھانے کے وقفے تک مزید کوئی وکٹ نہ گرنے دی، جب کھانے کا وقفہ ہوا تو پاکستان نے دو وکٹ کے نقصان پر 76 رنز بنائے تھے۔ انگلینڈ کی جانب سے دونوں وکٹیں کرس ووکس نے حاصل کئے۔ بعد کے سیشن میں اسٹوارٹ براڈ اور پہلا ٹسٹ کھیلنے والے جیک بال نے فی کس ایک وکٹ لی۔ اس میچ کی خاص بات فاسٹ بولر محمد عامر کی ٹسٹ کرکٹ میں واپسی ہے جن سے چھ سال قبل اسی گراؤنڈ پر اسپاٹ فکسنگ کا جرم سرزد ہوا تھا اور وہ 2010ء کے لارڈز ٹسٹ کے بعد پہلی مرتبہ ٹسٹ میچ کیلئے میدان میں اتریں گے۔

TOPPOPULARRECENT