Saturday , October 21 2017
Home / اضلاع کی خبریں / لفٹ میں پھنس کر مسلم طالبہ کے فوت ہونے پر اظہار دکھ

لفٹ میں پھنس کر مسلم طالبہ کے فوت ہونے پر اظہار دکھ

میدک ۔ 19 ۔ نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) دلسکھ نگر مسرم باغ کے علاقہ میں واقع خانگی اسکول سری چیتنیہ اسکول میں 17 نومبر کو لفٹ میں پھنس کر فوت ہونے والی معصوم طالبہ زینب فاطمہ جعفری کے غم زدہ والدین کو حکومت اور انتظامیہ اسکول کی جانب سے مالی تعاون کیا جائے ۔ ٹی آر ایس قائد میر اصغر علی اور کانگریس قائد مسرٹ میر برکت علی احسان نے اپنے ایک مشترکہ بیان میں معصوم طالبہ کی موت پر گہرے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے ان خیالات کا اطہار کیا۔ مسٹر اصغر اور برکت علی حسان نے اسکول کے پرنسپل کی گرفتاری کو حق بجانب قرار دیتے ہوئے ریاستی حکومت اور محکمہ تعلیمات کے ریاستی عہدیداران سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ فی الفور دلسکھ نگر علاقہ کے منڈل ایجوکیشنل آفیسر ، تعلیمی ڈیویژن کے ڈپٹی ڈی ای او کے علاوہ ضلع مہتمم تعلیمات کو بھی خدمات سے معطلی پر زور دیا ۔ انوہں نے کہا کہ حکومت کو چاہئے کہ اپارٹمنٹس ، فلائیٹس اور حیدرآباد کی گلی کوچوں میں موجود تمام اسکولوں کا خصوصی سروے کریں اور ایسے اسکولوں کو مہر بند کرتے ہوئے انتظامیہ کے خلاف کارروائیاں کریں ۔ ان قائدین نے آحر میں پھر ایک بار ( متعلقہ ایم اے او ، ڈپٹی ڈی ای او اور ڈی ای او کے خلاف بھی کارروائیاں کرنے کا مطالبہ کیا ۔ انہوں نے سوال کیا کہ کس طرح اپارٹمنٹس میں اسکول چلانے کی اجازت نامہ جاری کیا گیا ؟ ۔

TOPPOPULARRECENT